Tuesday , December 12 2017
Home / اضلاع کی خبریں / دارالحکومت آندھراپردیش کی مثالی تعمیر کیلئے انوکھے اقدامات

دارالحکومت آندھراپردیش کی مثالی تعمیر کیلئے انوکھے اقدامات

مدن پلی /14 اکٹوبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) تقسیم ریاست کے بعد آندھراپردیش کی راجدھانی کی تعمیر کیلئے ہر ایک کو کمربستہ کرتے ہوئے چیف منسٹر چندرا بابو نائیڈو اپنے اپنے مقامات کی مٹیک اور پانی کو امراوتی میں جمع کرانے کی ہدایت دی ۔ چیف منسٹر چندرا بابو نائیڈو اپنے آبائی مقام تروپتی کے قریب میں واقع ناراواری پلی پہونچ کر مٹیک ( مکوڑہ کی مٹی ) ant hill اور پانی کو حاصل کیا اور متبرکا اس مٹی اور پانی کو ہندو مذہب کے مطابق پوجا پاٹ کیا اور مسلم مذہب کے مطابق فاتحہ خوانی اور عیسائی مذہب کے مطابق دعاء کروائی اور بعد میں ناراواری پلی کے عوام نے اس مقدس مٹی اور پانی کو جلوس کی شکل میں نکالا ۔ واضح رہے کہ دو دن پہلے آندھراپردیش ہائی کورٹ نے ایک PIL کے سنوائی کے بعد آندھراپردیش حکومت کو ہدایت جاری کیا کہ سارے مذاہب کو مدنظر رکھتے ہوئے نئی راجدھانی کی تعمیر کی جائے ۔ اسی لئے ہر جگہ ہندو مسلم عیسائی مذہب کے مطابق دعاء اور پوجا کرکے مٹی اور پانی حاصل کیا جارہا ہے ۔ اس موقع پر چندرا بابو نئایڈو نے کہا کہ آندھراپردیش کی راجدھانی ساری دنیا میں سرفہرست رہے گی ۔ سنگاپور اور جاپان کو بھی پیچھے چھوڑ دے گی ۔ ساری دنیا آندھراپردیش کی راجدھانی کو حسرت بھری نگاہ سے دیکھتی رہ جائے گی اور 22 اکٹوبر کو امراوتی میں وزیر اعظم نریندر مودی کے ہاتھوں سنگ بنیاد رکھا جائے گا ۔ اننت پور سے سری کاکلم تک پر ہم فاصلہ پر بنائی جانے والے یہ راجدھانی کیلئے 16000 گاؤں سے مٹی اور پانی کو حاصل کیا جارہا ہے جو اضلاع سے امرواتی کو پہونچایا جائے گا ۔ انہوں نے گذارش کی کہ 22 اکٹوبر کو پیدا ہونے والی لڑکیوں کو امراوتی کا نام رکھیں ۔ راجدھانی کی تعمیر کیلئے عوام بھی اپنی طرف سے امداد کریں ۔ ہر ضلع میں اس کیلئے انتظام کیا جائے گا ۔ اس موقع پر ریاستی وزیر گوپال کرشنا ریڈی رکن پارلیمان شیوا پرساد رکن کونسل جی سرینیواسلو ضلع کلکٹر سدھارتھ جین و دیگر نے شرکت کی ۔

TOPPOPULARRECENT