Tuesday , September 25 2018
Home / شہر کی خبریں / دارالقضاۃ اور وقف بورڈ کے چار ملازمین کے خلاف وجہ نمائی نوٹس

دارالقضاۃ اور وقف بورڈ کے چار ملازمین کے خلاف وجہ نمائی نوٹس

دارالقضاۃ اور وقف بورڈ کے چار ملازمین کے خلاف وجہ نمائی نوٹس ہفتہ تک جواب داخل کرنے کی مہلت ، اسپیشل آفیسر وقف بورڈ جناب ایم جے اکبر کا اقدام

دارالقضاۃ اور وقف بورڈ کے چار ملازمین کے خلاف وجہ نمائی نوٹس
ہفتہ تک جواب داخل کرنے کی مہلت ، اسپیشل آفیسر وقف بورڈ جناب ایم جے اکبر کا اقدام
حیدرآباد۔/5مارچ، ( سیاست نیوز) اسپیشل آفیسر وقف بورڈ محمد جلال الدین اکبر نے آج دارالقضاۃ اور وقف بورڈ کے جملہ 4 ملازمین کے خلاف وجہ نمائی نوٹس جاری کی ہے اور انہیں ہفتہ تک جواب داخل کرنے کی مہلت دی گئی۔ حج ہاوز میں دارالقضاۃ سے متعلق ریکارڈ کو کچرے دان کی نذر کرنے کے معاملہ کا روز نامہ ’سیاست‘ کی جانب سے انکشاف کئے جانے کے بعد محکمہ اقلیتی بہبود نے اس مسئلہ کا سنجیدگی سے نوٹ لیا ہے۔ حج ہاوز میں واقع دیگر دفاتر میں بھی ریکارڈ کے تحفظ کیلئے چوکسی اختیار کرلی گئی۔ تمام محکمہ جات کے عہدیداروں نے اس واقعہ پر نہ صرف تشویش کا اظہار کیا بلکہ عملہ کی لاپرواہی پر افسوس جتایا۔ اسپیشل آفیسر وقف بورڈ نے اس سلسلہ میں چیف ایکزیکیٹو آفیسر سے رپورٹ طلب کی جس کی بنیاد پر چار ملازمین کے خلاف تادیبی کارروائی کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ جناب جلال الدین اکبر نے آج متعلقہ فائیل پر دستخط کی جس کے بعد چاروں ملازمین کو وجہ نمائی نوٹس جاری کی گئی کہ ریکارڈ کے تحفظ میں ناکامی کیلئے کیوں نہ انہیں معطل کیا جائے۔ جواب داخل کرنے کیلئے تین دن یعنی ہفتہ تک کا وقت دیا گیا ہے۔ وقف بورڈ چاروں ملازمین کے جواب داخل کرنے کے بعد مزید کارروائی کا فیصلہ کرے گا۔ جن چار افراد کو وجہ نمائی نوٹس جاری کی گئی ان میں دارالقضاۃ کے 2 عہدیدار شامل ہیں اس کے علاوہ وقف بورڈ کے 2افراد جنہیں ریکارڈ کے تحفظ کی ذمہ داری دی گئی تھی انہیں بھی نوٹس حوالہ کی گئی۔ چیف ایکزیکیٹو آفیسر کے مطابق جن افراد کو نوٹس جاری کی گئی ہے ان میں قاضی اکرام اللہ، فاروق عارفی، محمد رفیع اور اصغر علی شامل ہیں۔

TOPPOPULARRECENT