Wednesday , November 22 2017
Home / دنیا / داعش سے تجارت کے روسی الزامات مسترد : بلال اُردغان

داعش سے تجارت کے روسی الزامات مسترد : بلال اُردغان

انقرہ۔ 9 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) صدر ترکی رجب طیب اُردغان کے صاحبزادہ بلال اُردغان نے روس کے ان الزامات کو مسترد کردیا ہے جن میں کہا گیا تھا کہ ترکی کے صدر اور ان کے خاندان کا شام اور عراق میں داعش کے زیر قبضہ علاقوں سے غیر قانونی طور پر اسمگل کیے جانے والے تیل کی تجارت سے تعلق ہے۔ انھوں نے کہا ہے کہ ان کا داعش کے ساتھ کسی قسم کا کوئی تجارتی تعلق نہیں ہے۔ انھوں نے ایک اطالوی اخبار کو انٹرویو میں کہا ہے کہ’’ہمارے دفاتر استنبول میں قائم ہیں۔ہم بحر متوسطہ ، شام یا عراق میں کوئی کاروبار نہیں کررہے ہیں‘‘۔انھوں نے کہا کہ ’’داعش ہمارے ملک کے دشمن ہیں، داعش نے میرے دین کو داغ دار کیا ہے ، وہ (داعش) اسلام کی نمائندگی نہیں کرتے ہیں اور میں تو انھیں مسلمان بھی نہیں سمجھتا ‘‘۔ بلال اُردغان صدر ترکی کے چار بچوں میں سے ایک ہیں۔ان کے شپنگ اور میری ٹائم اثاثے ہیں۔ ان کی دوسرے فرمس کے ساتھ شراکت داری ہے۔ ان کی کمپنی ان فرمس کے ساتھ مل کر متعدد آئیل ٹینکرس چلاتی ہے،تاہم انھوں نے کسی قسم کی آپریشنل شپنگ سرگرمیوں سے انکار کیا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ ان کی کمپنی نے ایک روسی صارف کیلئے ’’دریائی ٹینکر‘‘ کنٹراکٹ پر تیار کئے تھے ۔

TOPPOPULARRECENT