Thursday , January 18 2018
Home / دنیا / داعش پر حملوں کیلئے ترکی کا اڈے دینے سے انکار

داعش پر حملوں کیلئے ترکی کا اڈے دینے سے انکار

سرحد کے قریب جہادیوں کے ساتھ کرد جنگجوؤں کی شدید جھڑپیں

سرحد کے قریب جہادیوں کے ساتھ کرد جنگجوؤں کی شدید جھڑپیں
مرستپنار (ترکی)، 13 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) کرد جنگجو آج کوبانی کے قریب ترک سرحد پر جہادیوں کے ساتھ شدید جھڑپوں میں مصروف دیکھے گئے جبکہ انقرہ نے اسلامک اسٹیٹ گروپ کے خلاف اپنے اڈے استعمال کرنے کی واشنگٹن کو اجازت دینے سے انکار کردیا۔ امریکی عہدیداروں نے قبل ازیں کہا تھا کہ ترکی بھی ’’اعتدال پسند‘‘ شامی باغیوں کیلئے ٹریننگ کا اہتمام کرے گا اور ایسی امید باندھی تھی کہ بالآخر میدان لڑائی پر آئی ایس سے نمٹنے کیلئے باصلاحیت فورس تشکیل دی جاسکے گی۔ ترک حکومت کے ایک عہدیدار نے جنوبی ترکی کے ایک فضائی اڈہ کے بارے میں نیوز ایجنسی اے ایف پی کو بتایا کہ امریکہ کے ساتھ انسیرلک کے تعلق سے کوئی نیا معاہدہ نہیں ہوا ہے جبکہ امریکہ وہاں سے فضائی حملے کرنے کا خواہاں ہے۔ عہدیدار نے مزید کہا کہ ترک شرائط کی اساس پر جو پہلے ہی واضح کردی گئی، مذاکرات جاری ہیں۔ کوبانی کے قریب آج صبح لڑائی پھیلتے ہوئے کلیدی ٹاؤن کے شمال میں سرحدی علاقہ تک پہنچ گئی۔

TOPPOPULARRECENT