Monday , December 18 2017
Home / ہندوستان / دالوں کی قیمتوں میں بھاری اضافہ پر حکومت کو بھی تشویش

دالوں کی قیمتوں میں بھاری اضافہ پر حکومت کو بھی تشویش

میانمار اور آفریقہ سے دالیں درآمدکرنے کا فیصلہ ، اعلیٰ سطحی اجلاس میں جیٹلی کاوزراء سے تبادلہ خیال

نئی دہلی۔ 15 جون (سیاست ڈاٹ کام) ایک ایسے وقت جب دالوں کی قیمتیں 170 روپئے فی کیلو سے تجاوز کرچکی ہیں ، حکومت بھی اس مسئلہ سے نمٹنے کیلئے سرگرم ہوچکی ہے اور قیمتوں پر کنٹرول کیلئے میانمار اور آفریقہ سے دالیں درآمدکرتے ہوئے ذخیرہ میں بھاری اضافہ کا فیصلہ کیا ہے۔ دالوں کی بڑھتی ہوئی قیمتوں پر حکومت مختلف گوشوں کی سخت تنقیدوں کا شکار ہے۔ اس دوران وزیر اغذیہ رام ولاس پاسوان نے قیمتوں میں اضافہ کیلئے اپنی حکومت پر عائد ہونے والے الزامات کیلئے ریاستوں کو موردالزام ٹھہراتے ہوئے کہا کہ ضروری اشیاء کی قیمتوں کو قابو میں رکھنا ریاستوں کی بھی مساوی ذمہ داری ہے۔ ضروری اشیاء کی قیمتوں پر کنٹرول کیلئے آج یہاں منعقدہ اعلیٰ سطحی اجلاس میں وزیر فینانس ارون جیٹلی نے وزیر زراعت رادھا موہن سنگھ ، وزیر اغذیہ رام ولاس پاسوان ، وزیر کامرس نرملا سیتا رامن اور وزیر شہری ترقیات ایم وینکیا نائیڈو سے تبادلہ خیال کیا۔ حکومت نے بالخصوص دالوں کی قیمتیں 170 روپئے فی کیلو اور ٹماٹوں کی قیمت 100 روپئے فی کیلو تک پہونچ جانے پر گہری تشویش کا اظہار کیااور ان اشیاء کی سربراہی میں اضافہ اور قیمتوں پر کنٹرول کے مختلف طریقوں پر غور کیا گیا۔ ذرائع نے کہا کہ دالوں کی طلب اور رسد میں 70 لاکھ ٹن کی قلت پائی جاتی ہے۔

TOPPOPULARRECENT