Thursday , November 22 2018
Home / ہندوستان / درگاہ اجمیر کے دیوان نے اپنے بیٹے کو جانشین مقرر کیا

درگاہ اجمیر کے دیوان نے اپنے بیٹے کو جانشین مقرر کیا

مقررکردہ جانشین ناصرالدین چشتی پر خادمین درگاہ کو سخت اعتراضات
اجمیر۔ 25 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) درگاہ اجمیر کے دیوان زین العابدین علی خاں نے اپنے بیٹے ناصر الدین چشتی کو اپنا جانشین ہونے کا اعلان کردیا ہے۔ زین العابدین نے اپنے بیٹے کی وراثت کا اعلان صوفی خواجہ معین الدین چشتیؒ کے اجمیر میں منعقد روایتی عرس کی تقریب میں کیا۔ واضح رہے کہ ’’دیوان‘‘ درگاہ اجمیر کا اعلی سربراہ ہوتا ہے۔ دلچسپ پہلو یہ ہے کہ دیوان زین العابدین علی خاں نے اپنے بیٹے ناصرالدین چشتی کے جانشین کا اعلان کیا ہے لیکن درگاہ کے دوسرے خادمین اور نگہبان کو ان کے اس فیصلے پر سخت اعتراضات ہیں۔ انہوں نے والد اور بیٹے کو ایک ساتھ درگاہ میں گزشتہ رات داخل بھی نہیں ہونے دیا۔ اطلاعات کے مطابق دیوان زین العابدین گزشتہ رات درگاہ میں مذہبی امور کی ادائیگی کی غرض سے داخل ہونا چاہتے تھے لیکن دونوں کے داخلوں کو ممنوع قرار دے دیا گیا۔ پولیس کے مطابق خادمین درگاہ اور دیوان کے درمیان کسی معاملے پر اختلاف تھا۔ دیوان درگاہ میں اپنے بیٹے کے ساتھ داخل ہونا چاہتے تھے لیکن خادمین نے ان کو داخل ہونے نہیں دیا۔ معاملہ کو بڑھتا دیکھ کر پولیس کو دخل دینا پڑا۔ بعدازاں خادمین اور دیوان زین العابدین کے درمیان آپسی بات چیت کے ذریعہ معاملہ کی یکسوئی ہوگئی۔ درگاہ کی گیٹ کو دیوان اور ان کے بیٹے کیلئے بالآخر کھول دیا گیا۔

TOPPOPULARRECENT