Monday , June 18 2018
Home / شہر کی خبریں / دسمبر 2018 تک میٹرو پراجکٹ کے کاموں کو مکمل کرنے کا نشانہ

دسمبر 2018 تک میٹرو پراجکٹ کے کاموں کو مکمل کرنے کا نشانہ

املی بن تا فلک نما میٹرو ریل پر عدم توجہ ، پراجکٹ کے کاموں میں تیزی
حیدرآباد ۔ 8 ۔ دسمبر : ( سیاست نیوز ) : سوائے املی بن تا فلک نما 6 کیلو میٹر تک میٹرو ریل چلانے کے مزید 42 کیلو میٹر تک میٹرو ریل چلانے کے تعمیری کاموں میں تیزی پیدا کردی گئی ۔ دسمبر 2018 تک تمام تعمیری کاموں کو تکمیل کرنے کا نشانہ مختص کرتے ہوئے کام کیا جارہا ہے ۔ پہلے مرحلے کی میٹرو ریل سرویس پر عوام کے مثبت ردعمل کو دیکھتے ہوئے ماباقی کاموں کو جلد سے جلد تکمیل کرنے کے اقدامات کئے جارہے ہیں۔ ایل اینڈ ٹی کمپنی نے ان کاموں کو 6 اسٹیجس میں تقسیم کیا ہے ۔ جون 2018 تک کاریڈار 3 کے ماباقی کاموں کو مکمل کرنے کی منصوبہ بندی کرتے ہوئے کام کیا جارہا ہے ۔ اسٹیج 4 سے تعلق رکھنے والے امیر پیٹ تا ہائی ٹیک سٹی کے کاموں کو کاریڈار I کے اسٹیج 5 سے متعلق امیر پیٹ تا ایل بی نگر تک کاموں کی تکمیل کرتے ہوئے کاریڈار 3 ، 1 کے کاموں کو مکمل کرتے ہوئے میٹرو ریل چلانے کی تیاریاں کی جارہی ہیں ۔ کاریڈار 2 میں شامل پرانے شہر کے سوائے 6 کیلو میٹر کے ماباقی 66 کیلو میٹر کے تعمیری کاموں میں تیزی پیدا کردی گئی ہے ۔ ایل اینڈ ٹی کے عہدیداروں نے بتایا کہ تینوں کاریڈارس کے 90 فیصد کام تقریبا مکمل ہوگئے ہیں ۔ میاں پور تا ایل بی نگر کے درمیان موجود ( کاریڈار1 ) کے راستے پر اسٹیج 2 کے کاموں میں میاں پور تا امیر پیٹ کے ٹریک کے کام مکمل ہوگئے ۔ اسٹیج 5 کے تحت موجود امیر پیٹ تا ایل بی نگر کے کام باقی ہے ۔ کاریڈار 3 کو تین اسٹیجس میں تقسیم کیا گیا ہے ۔ اسٹیج 1 کے ناگول تا میٹو گوڑہ ۔ اسٹیج 3 کے میٹو گوڑہ تا امیر پیٹ کے کام مکمل ہوچکے ہیں اور میٹرو ریل بھی چلائی جارہی ہے ۔ اسٹیج 4 کے بیگم پیٹ تا ہائی ٹیک سٹی کے کام تیزی سے جاری ہیں ۔ دوسرے کاریڈار کے کام جون 2018 تک مکمل کرتے ہوئے 57 کیلو میٹر تک میٹرو ریل چلانے کے کام تیزی سے مکمل کئے جارہے ہیں ۔ کاریڈار 2 کے تحت جے بی ایس سے فلک نما تک ریلوے ٹریک بچھانا ہے ۔ مگر اس میں اسٹیج 6/1 کے تحت جے بی ایس سے ایم جی بی ایس تک تمام پلرس کا کام تقریبا مکمل ہوگیا ہے ۔ ایم جی بی ایس کے پاس انٹر چینج کے کام بھی مکمل ہوگئے ہیں ۔۔

TOPPOPULARRECENT