Friday , September 21 2018
Home / شہر کی خبریں / دلت کو چیف منسٹر بنانے کی تجویز سے دستبرداری اختیار نہیں کی گئی

دلت کو چیف منسٹر بنانے کی تجویز سے دستبرداری اختیار نہیں کی گئی

مناسب وقت پر فیصلہ کیا جائے گا ۔ منشور کے وعدوں پر عمل کیا جائیگا : کیشو راؤ کی وضاحت

مناسب وقت پر فیصلہ کیا جائے گا ۔ منشور کے وعدوں پر عمل کیا جائیگا : کیشو راؤ کی وضاحت

حیدرآباد۔/15اپریل، ( سیاست نیوز) ٹی آر ایس پر دلت چیف منسٹر سے متعلق وعدہ سے انحراف کیلئے مختلف جماعتوں سے تنقیدوں کے پس منظر میں پارٹی کے قومی سکریٹری جنرل ڈاکٹر کیشور راؤ نے وضاحت کی کہ تلنگانہ میں دلت چیف منسٹر کی تجویز سے پارٹی نے دستبرداری اختیار نہیں کی ہے۔ اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے ڈاکٹر کیشو راؤ نے کہا کہ دلت چیف منسٹر کا مسئلہ پارٹی میں ابھی بھی برقرار ہے اور مناسب وقت پر اس سلسلہ میں فیصلہ کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس اور دیگر جماعتوں کی جانب سے ٹی آر ایس پر مخالف دلت ہونے اور وعدوں سے انحراف سے متعلق الزامات بے بنیاد ہیں۔ انہوں نے کہا کہ امیدواروں کے انتخاب میں پارٹی نے 55فیصد کمزور طبقات سے تعلق رکھنے والے امیدواروں کو نمائندگی دی ہے۔ انہوں نے کہا کہ انتخابی منشور میں پسماندہ طبقات اور دلتوں کی ترقی سے متعلق جو وعدے کئے گئے ان پر بہر صورت عمل کیا جائے گا۔ کیشو راؤ نے کہا کہ تلنگانہ کو مضبوط قیادت کی ضرورت ہے اور ایسی شخصیت کو چیف منسٹر بنایا جانا چاہیئے جو کم از کم10برسوں تک تلنگانہ کی تعمیرِ نو میں اہم رول ادا کرسکے۔ انہوں نے انتخابات کے بعد ٹی آر ایس کی جانب سے تیسرے محاذ کی تائید سے متعلق کے سی آر کے بیان کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ تیسرا محاذ دراصل پارٹی کیلئے ایک سیاسی متبادل ہے۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس اور بی جے پی کے متبادل کے طور پر اگر تیسرا محاذ تشکیل پائے گا تو اس وقت ٹی آر ایس تائید پر غور کرے گی۔ انہوں نے بی جے پی قائدین کے ان بیانات پر افسوس کا اظہار کیا جس میں این ڈی اے کی تائید نہ کرنے کی صورت میں مرکز سے فنڈز جاری نہ کرنے کی بات کہی گئی ہے۔ کیشو راؤ نے کہاکہ تلنگانہ ریاست کی ترقی اور تعمیرِ نو کیلئے مضبوط قیادت کی ضرورت ہے۔ ٹی آر ایس کے برسراقتدار آنے پر تعلیم، صحت اور دیگر اہم شعبوں میں عوامی خدمات کو بہتر بنانے خصوصی توجہ مرکوز کی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ مرکزی فنڈز کسی کی جاگیر نہیں ہیں بلکہ اس پر تمام ریاستوں کا مساوی حق ہے۔ ٹی آر ایس کی حکومت مرکز سے فنڈز کے حصول کے اقدامات کرے گی اور یہ فنڈز تلنگانہ ریاست کی ترقی پر خرچ کئے جائیں گے۔ کیشو راؤ نے یقین ظاہر کیاکہ ٹی آر ایس تلنگانہ میں واضح طور پر اکثریت حاصل کرے گی۔

TOPPOPULARRECENT