Tuesday , December 11 2018

دونوں شہروں میں اتوار کو پلس پولیو پروگرام

حیدرآباد ۔ 18 ۔ فروری : ( سیاست نیوز) : دونوں شہروں حیدرآباد و سکندرآباد میں 22 فروری بروز اتوار کو پلس پولیو ڈراپس پلانے کے انتظامات مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد کی جانب سے مکمل کرلیے گئے ہیں ۔ جی ایچ ایم سی کی جانب سے دونوں شہروں حیدرآباد و سکندرآباد میں پولیو سے نجات کے لیے 5 سال سے کم عمر بچوں کو ڈراپس ڈالے جائیں گے اور اس خصوص میں فراہ

حیدرآباد ۔ 18 ۔ فروری : ( سیاست نیوز) : دونوں شہروں حیدرآباد و سکندرآباد میں 22 فروری بروز اتوار کو پلس پولیو ڈراپس پلانے کے انتظامات مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد کی جانب سے مکمل کرلیے گئے ہیں ۔ جی ایچ ایم سی کی جانب سے دونوں شہروں حیدرآباد و سکندرآباد میں پولیو سے نجات کے لیے 5 سال سے کم عمر بچوں کو ڈراپس ڈالے جائیں گے اور اس خصوص میں فراہم کردہ تفصیلات کے بموجب حیدرآباد میں 5 لاکھ 83 ہزار بچوں کو ڈراپس ڈالے جائیں گے ۔ جب کہ ضلع رنگاریڈی میں 4 لاکھ 16 ہزار بچوں کو ڈراپس پلائے جائیں گے ۔ مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد کی جانب سے پلس پولیو مراکز کے علاوہ 115 موبائیل ٹیمیں بھی تشکیل دی گئی ہیں ۔ جو بچوں کو پولیو ڈراپس پلائیں گی ۔ 226 ٹرانزٹ پوائنٹس بھی بنائے گئے ہیں ۔ 22 فروری کو صبح 7 بجے تا شام 6 بجے بلدیہ کی جانب سے یہ مراکز خدمات انجام دیں گے ۔ جہاں والدین و سرپرست اپنے 5 سال سے کم عمر بچوں کو پولیو ڈراپس ڈلواسکتے ہیں ۔ بلدیہ کی جانب سے جی ایچ ایم سی حدود میں 367 ایسے مقامات کی نشاندہی کی گئی ہے جہاں پولیو کے خطرات پائے جاتے ہیں ۔ ان علاقوں میں 9345 بچوںکو ڈراپس پلائے جائیں گے ۔ کمشنر و اسپیشل آفیسر مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد مسٹر سومیش کمار کے بموجب بلدی حدود میں 10 لاکھ بچوں کو پولیو ڈراپس پلانے کا نشانہ مقرر کیا گیا ہے اور اسی اعتبار سے تیاری بھی کی جاچکی ہیں ۔ انہوں نے بتایا کہ مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد کے حدود میں 22 فروری کو 3035 پولیو مراکز خدمات انجام دیں گے ۔ جہاں 5 سال سے کم عمر کے بچوں کو ڈراپس ڈالنے کے لیے عملہ موجود رہے گا ۔ اسی طرح 22 فروری کو ڈراپس ڈلوانے میں ناکام ہونے والوں کے لیے بلدی عملہ 23 تا 25 فروری گھروں پر پہنچ کر ڈراپس ڈالے گا ۔۔

TOPPOPULARRECENT