Friday , November 24 2017
Home / عرب دنیا / دہشت گردی کے خاتمہ کیلئے سعودی عرب اور پاکستان میں تعاون کا عزم

دہشت گردی کے خاتمہ کیلئے سعودی عرب اور پاکستان میں تعاون کا عزم

پاکستانی فوج کے سربراہ جنرل راحیل شریف کی سعودی شاہ سلمان سے ریاض میں بات چیت
ریاض ۔ 4 ۔ نومبر (سیاست ڈاٹ کام) پاکستان کی مسلح افواج کے سربراہ جنرل راحیل شریف نے الریاض میں سعودی فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز سے ملاقات میں دونوں ملکوں کی سلامتی اور اہم علاقائی امور پر تبادلہ خیال کیا ہے۔ دونوں رہ نماؤں نے دہشت گردی کی لعنت کے خاتمہ اور انتہا پسندی کے استیصال کے لیے دوطرفہ تعاون بڑھانے کی ضرورت پر زور دیا ہے۔پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے ڈائریکٹر جنرل ،لیفٹینٹ جنرل عاصم سلیم باجوہ نے اپنے ٹویٹس میں بتایا ہے کہ جنرل راحیل شریف نے سعودی شاہ سلمان بن عبدالعزیز ،ولی عہد شہزادہ محمد بن نایف اور وزیر دفاع شہزادہ محمد بن سلمان سے ملاقاتیں کی ہیں اور ان سے باہمی دلچسپی کے امور اور سکیورٹی کے شعبے میں دوطرفہ تعاون بڑھانے سے متعلق امور پر تبادلہ خیال کیا ہے۔سعودی قیادت نے آرمی چیف کو اس یقین دہانی کا اعادہ کیا ہے کہ سعودی عرب کے لیے پاکستان کو درپیش کوئی خطرہ بھی ناقابل قبول ہے اور وہ اپنے دیرینہ دوست ملک میں امن اور استحکام کی حمایت کرتا ہے۔

شاہ سلمان اور جنرل راحیل شریف کے درمیان ملاقات میں واضح کیا گیا ہے کہ پاکستان اور سعودی عرب علاقائی استحکام اور خاص طور پر مسلم اْمہ میں امن واستحکام کے اہم کردار ہیں۔آرمی چیف نے پاکستان کی جانب سے الحرمین الشریفین کے تحفظ اور سعودی عرب کی علاقائی سالمیت کے دفاع کے عزم کا اعادہ کیا۔ دونوں لیڈروں نے کہا کہ پاکستان اور سعودی عرب دوطرفہ مضبوط اور شاندار تعلقات اور بھائی چارے کی تاریخ کے حامل ہیں۔یہ دوستی ایک پائیدار شراکت داری میں تبدیل ہوچکی ہے۔اس موقع پر سعودی ولی عہد، ڈپٹی وزیر اعظم شہزادہ محمد بن نایف بن عبدالعزیز، نائب ولی عہد اور وزیر دفاع شہزادہ محمد بن سلمان بن عبدالعزیز، وزیر مملکت اور وزارتی کونسل کے رکن ڈاکٹر مساعد بن محمد العیبان اور عزت ماب وزیر ثقافت اور اطلاعات ڈاکٹر عادل بن زید الطریفی بھی موجود تھے۔پاکستان کے سعودی عرب میں سفیر منظور الحق، ملٹری اتاشی بریگیڈئر طاہر گلزار اور جنرل راحیل کے معاون خصوصی بھی اس موقع پر موجود تھے۔جنرل راحیل شریف منگل کو سعودی عرب کے دو روزہ دورے پر پہنچے تھے۔سعودی عرب کے نائب وزیردفاع اور بری افواج کے کمانڈر نے ان کا استقبال کیا تھا۔انھوں نے سعودی مسلح افواج کے چیف آف جنرل اسٹاف جنرل عبدالرحمان بن صالح آل بنیان سے بھی ملاقات کی تھی اور ان سے دونوں مسلح افواج کے درمیان دفاعی تعاون کے علاوہ علاقائی سلامتی کی صورت حال پر تبادلہ خیال کیا تھا۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT