Friday , December 15 2017
Home / اضلاع کی خبریں / رائلسیما میں موثر آبی سربراہی کیلئے اقدامات

رائلسیما میں موثر آبی سربراہی کیلئے اقدامات

آبپاشی پراجکٹ کو نومبر تک مکمل کرنے عہدیداروں کو کلکٹر کی ہدایت
مدن پلی /10 ستمبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) ضلع کلکٹر چتور سدھارتھ جین نے مدن پلی پہنچ کر ہندری ۔ نیوا پراجکٹ کے کاموں کا معائنہ کیا اور کہا کہ کاموں میں مزید رفتار کو بڑھائیں ۔ مدن پلی مضافات چپلی ، رامی ریڈی گاری پلی ، کاٹلاٹا پلی کے مقامات میں چل رہی کھدوائی کی رفتار پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ اس رفتار سے وقت پر کام مکمل نہیں ہوگا اور حکومت جلد از جلد آبی سربراہی کیلئے کوشاں ہے ۔ اس لئے جدید طریقہ کار کو اپنائیں اور اخراجات کی پرواہ نہ کریں اور نومبر کے اندر کام کو تکمیل کریں ۔ اب تک جو کام ہوا ہے اس کی رقم کی ادائیگی ھبی کردی جائے گی ۔ انہوں نے بالخصوص 59 ویں پیاکیج کے کاموں پر HNSS کے عہدیداروں کی نگرانی پر زور دیا اور کہا کہ وہاں پر کام کی رفتار کو تیزی سے بڑھانا ہے اور اس کی تکمیل کے بناء پانی کی سربراہی ممکن نہیں ۔ واضح رہے کہ ہندری ۔ نیوا کا پانی کا پراجکٹ رائلسیما علاقہ کیلئے ایک نعمت غیر مترقبہ ہے جو 2005 میں ڈاکٹر وی ایس راج شیکھر ریڈی نے شروع کیا ۔ 500 کیلومیٹر لمبی اس Canal کا مقصد 6 لاکھ ایکڑ کی زمین کیلئے آبپاشی ضروریات اور پینے کے پانی کی فراہمی ہے ۔ جن کا پانی سری سیلم سے شروع ہوتی ہے ۔ کرنول ، اننت پور اضلاع سے ضلع چتور تک پہونچتا ہے ۔اگر یہ کام تکمیل ہوکر پانی کی فراہمی ہوگئی تو رائل سیما کا قحط ختم ہوجائے گا ۔ اس لئے چیف منسٹر چندرا بابو نائیڈو بھی ہندری ۔ نیوا کے تکمیل کے خواہاں ہیں تاکہ اس کا سہرا اپنے سر لگے ۔ اس لئے کوتہ کوٹہ منڈل میں Trenches بھی کھدوائے جارہے ہیں اور ایک جگہ ریلوے لائین آنے پر ٹرین کی آمد و رفت کو روکے بغیر جدید ٹکنالوجی سے سرنگوں کی کھدوائی بھی کی جارہی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT