Thursday , December 14 2017
Home / ہندوستان / راجستھان: متنازعہ آرڈیننس اسمبلی کی منتخب کمیٹی سے رجوع

راجستھان: متنازعہ آرڈیننس اسمبلی کی منتخب کمیٹی سے رجوع

کمیٹی کو آئندہ سیشن میں رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت
جئے پور۔/24اکٹوبر، ( سیاست ڈاٹ کام ) مختلف گوشوں سے تنقیدوں کا سامنا ہونے پر حکومت راجستھان نے آج وہ متنازعہ بل اسمبلی کی منتخب کمیٹی سے رجوع کردیا، جو عوامی خدمت گذاروں اور ججوں کو حکومت کی پیشگی منظوری کے بغیر مقدمہ چلانے سے محفوظ رکھنے کی گنجائش فراہم کرتا ہے۔ اپوزیشن کانگریس کی طرف سے شوروغل کے درمیان فوجداری قوانین ( راجستھان ترمیم ) بل کو گزشتہ روز وزیر داخلہ گلاب چند کٹاریہ نے اسمبلی میں پیش کیا تھا تاکہ 7 ستمبر کو لاگو کردہ آرڈیننس کی جگہ لے سکے۔ آج وقفہ سوالات کی شروعات میں وزیر پارلیمانی اُمور راجیندر راٹھور نے ایوان کو بتایا کہ چیف منسٹر وسندھرا راجے نے گزشتہ شب وزراء کی میٹنگ منعقد کرتے ہوئے اس بل پر غور و خوض کیا اور یہ کہ وزیر داخلہ روئیداد سے ایوان کو واقف کرائیں گے۔ وزیر داخلہ نے کہا کہ ستمبر میں آرڈیننس متعارف کرنے سے قبل صدر جمہوریہ کی پیشگی منظوری حاصل کی گئی تھی۔ آزاد ایم ایل اے مانک چند سرانا نے گزشتہ جب اپوزیشن کے ارکان اس بل سے دستبرداری کا مطالبہ کرتے ہوئے ایوان کے وسط میں پہنچ گئے، کٹاریہ نے کہا کہ حکومت ارکان کی پیش کردہ تجاویز پر ضرور غور کرے گی۔ اس کے بعد انہوں نے اس بل کو منتخب کمیٹی سے رجوع کرنے کی تجویز پیش کی اور یہ تجویز اسمبلی نے منظور کرلی۔ منتخب کمیٹی سے اپنی رپورٹ آئندہ سیشن میں پیش کرنے کیلئے کہا گیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT