راجندرنگر حلقہ کے امیدوارمرزارحمت بیگ ،ڈرائیور سے رکن اسمبلی کے امیدوار تک کا سفر 

حیدرآباد : قسمت بھی ایک عجیب چیز ہے۔ قسمت کبھی آسمان میں اڑرہے لوگوں کو زمین پر لے آتی ہے اور کبھی زمین پر گمنامی میں زندگی گذارنے والوں کو شہرت کی بلندیوں پر پہنچادیتی ہے۔ اسی طرح کا ایک معاملہ شہر کے راجندرنگر حلقہ کے رکن اسمبلی کے امیدوار مرزا رحمت بیگ کے ساتھ پیش آیا ۔انہیں مجلس اتحاد المسلمین کی جانب سے حلقہ راجندرنگر کا امیدوار مقرر کیاگیا ۔مرزا رحمت بیگ پہلے اسی جماعت کے رکن اسمبلی جناب سید احمد پاشاہ قادری کی کار چلایا کرتے تھے ۔ تب انہوں نے خواب میں بھی نہیں سوچا تھا کہ وہ بھی ایک دن رکن اسمبلی کے امیدوار بنیں گے ۔ رحمت بیگ نے ۲۰۰۹ء میں ڈرائیور کی نوکری سے سبکدوش ہوگئے ۔

او رانہوں نے گولکنڈہ کے ابراہیم باغ سے صدر ابتدائی مجلس کی حیثیت سے اپنا سیاسی سفر شروع کیا ۔ ان کے والد پیشہ ایک سپلائنگ کمپنی چلا تے ہیں ۔ بعد ازاں انہوں نے حلقہ راجندر نگر میں اپنی بہتر کارکردگی کے ذریعہ سے عوام میں مقبول ہوگئے ۔ پچھلے بلدیہ کے انتخابات میں انہیں حلقہ راجندرنگر کے شاستری پورم اور سلیمان نگر ڈیوژن کے انچارج مقرر کیا گیا تھا ۔ اور ایم آئی ایم نے ان ڈیویژنس میں زبر دست کامیابی حاصل کی۔ اور مزے کی بات یہ ہے کہ رحمت بیگ کو رکن اسمبلی اور کا امیدوار بنائے جانے کا خود انہیں بھی پتہ نہیں تھا ۔ان کے ایک دوست نے انہیں بتایا کہ انہیں راجندرنگر سے رکن اسمبلی کی ٹکٹ دی گئی ہے ۔ اور اسد الدین اویسی صاحب نے ٹوئیٹر پر اس کا اعلان کیا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ انہوں نے کبھی سوچا بھی نہیں تھا کہ انہیں یہ ٹکٹ دیا جائے گا ۔ انہوں نے کہا کہ خدا شکر ہے کہ اللہ تعالی انہیں عوام کی خدمت کرنے کیلئے منتخب کرلیا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT