Saturday , November 18 2017
Home / دنیا / راجہ پکسے کو شکست ، رانیل نئے ویراعظم

راجہ پکسے کو شکست ، رانیل نئے ویراعظم

کولمبو ۔ 8 اگست (سیاست ڈاٹ کام) سری لنکا کے سابق صدر مہندا راجہ پکسے نے پارلیمانی انتخابات میں اپنی شکست کو تسلیم کرلیا حالانکہ قطعی نتائج کا اعلان نہیں کیا گیا تھا۔ اسی دوران 69 سالہ راجہ پکسے نے کہا کہ ان کی یونیفائیڈ پیپلز فریڈم الائنس (VPFA) کا یونائیٹیڈ نیشنل پارٹی نے کانٹے کا مقابلہ ہوا، جس سے وزیراعظم رانیل وکرم سنگھے وابستہ ہیں اور نتیجہ یہ ہوا کہ یو پی ایف اے کو کراری شکست کا سامنا کرنا پڑا۔ راجہ پکسے دو میعاد کے لئے سری لنکا کے صدر رہ چکے ہیں۔ جملہ 22 ڈسٹرکٹس کے مقابلے راجہ پکسے کی پارٹی کو 8 ڈسٹرکٹس میں اور وکرم سنگھے کی پارٹی 11 ڈسٹرکٹس میں کامیابی ملی جس سے یہ ظاہر ہوتا ہیکہ 225 رکنی اسمبلی میں واضح اکثریت دونوں ہی پارٹی کو نہیں ملی جبکہ واضح اکثریت کے لئے 113 نشستوں پر کامیابی حاصل کرنا ضروری ہے۔ دوسری طرف موجودہ صدر میتھری پالا سری سینا نے عزم کیا ہیکہ اگر راجہ پکسے کی پارٹی کو واضح اکثریت حاصل بھی ہوئی تو انہیں (راجہ پکسے) وزیراعظم نہیں بنایا جائے گا۔ دریں اثناء الیکشن کمشنر دیشاپریا نے آج سہ پہر تک مابقی انتخابی نتائج سامنے آنے اور مختلف پارٹیوں کے واضح موقف کی توقع ظاہر کی۔ اس طرح اب رانیل وکرم سنگھے کیلئے وزیراعظم کے عہدہ پر فائز ہونے کی راہ ہموار ہوگئی۔

TOPPOPULARRECENT