Monday , November 20 2017
Home / جرائم و حادثات / راشن چاول و شکر کی بلیک مارکیٹنگ پر چھ افراد گرفتار

راشن چاول و شکر کی بلیک مارکیٹنگ پر چھ افراد گرفتار

گولکنڈہ ، آصف نگر اور منگل ہاٹ میں ٹاسک فورس پولیس کی کارروائی ، اشیاء ضبط
حیدرآباد /18 ڈسمبر ( سیاست نیوز ) دونوں شہروں میں بڑے پیمانے پر راشن کے چاولوں اور شکر کی بلیک مارکیٹنگ میں ملوث چھ افراد کو کمشنر ٹاسک فورس نے گرفتار کرلیا اور ان کے قبضہ سے 370 کنٹل اشیاء برآمد کرلیا ۔ ڈپٹی کمشنر پولیس ٹاسک فورس مسٹر بی لِمبا ریڈی نے بتایا کہ ویسٹ زون ٹاسک فورس ٹیم نے علاقہ گولکنڈہ ، آصف نگر اور منگل ہاٹ علاقوں میں محکمہ سیول سپلائیز کی مدد سے دھاوے کرتے ہوئے بڑے پیمانے پر چاول اور دیگر اشیاء برآمد کرلیا ۔ انہوں نے بتایا کہ علاقہ گولکنڈہ میں سید مراد اور اس کے بھائی سید خالد راشن کارڈ رکھنے والے افراد سے راست طور پر  5 روپئے فی کیلو چاول حاصل کرکے اسے محمد حبیب اور اس کے دو بھائی محمد نعیم اور محمد جمیل کو 7.50 روپئے فی کیلو فروخت کر رہے تھے ۔ ہر ماہ 40 تا 50 کنٹل راشن کے چاولوں کی بلیک مارکیٹنگ کے ذریعہ 15 ہزار روپئے کا منافع حاصل کر رہے تھے ۔ مسٹر لِمبا ریڈی نے بتایا کہ محمد حبیب اور اس کے بھائی دیگر کئی افراد سے راشن کے چاول خرید کر اسے بلیک مارکیٹنگ میں ملوث ہے ۔ انہوں نے مزید بتایا کہ سابق میں بھی حبیب کو ضلع رنگاریڈی کے چیوڑلہ کے ڈیویژن میں اسی قسم کے واقعہ میں ملوث ہونے پر گرفتار کیا گیا تھا ۔ پولیس نے مذکورہ افراد کے قبضہ سے 521 چاول ، شکر اور گیہوں کے بیاگس جملہ 261 کنٹل برآمد کرلئے ۔ انہوں نے بتایا کہ نارتھ زون ٹاسک فورس ٹیم نے بھی چیف راشننگ آفیسرس کے دفتر کے وجیلنس انفورسمنٹ عہدیداروں کی مدد سے تین افراد کو ڈی سی ایس ناگیشور راؤ ، وی سنتوش کمار اور وی راکیش کو گرفتار کرلیا اور ان کے قبضہ سے 110 کنٹل راشن کی اشیاء اور دو ڈی سی ایم ویان برآمد کرلیا ۔ ڈی سی پی ٹاسک فورس نے بتایا کہ ناگیشور راؤ حیات نگر علاقہ میں روی انٹرپرائزس کے نام سے گودام چلا رہا تھا اور محکمہ سیول سپلائیز کو فراہم کئے جانے والی شکر فراہم کرنے والے دھاندلیاں کرتے ہوئے سرکاری شکر کو بلیک مارکیٹنگ میں فروخت کر رہے تھے ۔ ٹاسک فورس نے مذکورہ افراد کے قبضہ سے راشن کی اشیاء اور ڈی سی ایم ویانس برآمد کرلئے ۔

TOPPOPULARRECENT