Wednesday , December 13 2017
Home / سیاسیات / ’رام راجیہ میں غریب اور جانبداری کی گنجائش نہیں‘

’رام راجیہ میں غریب اور جانبداری کی گنجائش نہیں‘

ایودھیا میں دیوالی تقریب سے چیف منسٹر یوگی آدتیہ ناتھ کا خطاب
ایودھیا ۔ 18 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) اترپردیش کے چیف منسٹر یوگی آدتیہ ناتھ نے اپوزیشن کی تنقیدوں کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ مندروں کے اس شہر (ایودھیا) کو ترقی دینے ان کی حکومت کی کوششوں میں کوئی سیاست کارفرما نہیں ہے۔ اس شہر نے ہی ایک ایسے ’’رام راجیہ‘‘ کا نظریہ دیا جہاں غریبی اور بھیدبھاؤ کیلئے کوئی جگہ نہیں رہتی۔ دیوالی کے موقع پر دریائے سرایو کے کنارے منعقدہ روشنیوں سے چکاچوند تقریب سے خطاب کرتے ہوئے آدتیہ ناتھ نے اپنے ناقدین کی مذمت کی اور یہ دعویٰ کیا کہ چند ایسے بھی ہیں جنہوں نے اس بات سے قطع نظر کہ وہ کیا کررہے ہیں، ان کاموں کی مخالفت کی تھی اور ان کے اقدامات پر سوال اٹھایا تھا۔ یوگی آدتیہ ناتھ نے کہا کہ ’’ایودھیا نے ایک ایسے رام راجیہ کا نظریہ دیا جہاں غریب، دکھ درد اور امتیازی سلوک نہیں رہتا‘‘۔ انہوں نے کہا کہ رام راجیہ کے حقیقی معنی ہر کسی کیلئے ایک ایسے گھر کے ہیں جہاں ہر خاندان کو بجلی اور ایل پی جی سلنڈرس میسر ہوں۔ ’’چند ایسے بھی افراد ہیں جو ہمارے ہر کام کی مخالفت کرتے ہیں۔ اگر میں ایودھیا آتا ہوں تو وہ سوال اٹھاتے ہیں اور اگر نہیں آتا ہوں تو بھی سوال اٹھاتے ہیں اور کہتے ہیں کہ میں یہاں آنے سے ڈر رہا ہوں لیکن اب یہ کہہ رہے ہیں کہ ایودھیا پروگرام کے ذریعہ عوام کی توجہ ہٹارہے ہیں‘‘۔ یوگی آدتیہ ناتھ نے کہا کہ ’’ہم ذات پات اور مذہب کے نام پر امتیازی سلوک نہیں کرتے۔ ماضی میں ’روان راج‘ کے دوران خاندان، ذات اور دیگر عنصر پر فرق اور بھیدبھاؤ کیا جاتا تھا‘‘۔

TOPPOPULARRECENT