Tuesday , December 19 2017
Home / Top Stories / رام مندر کی تعمیر کی تاریخ کے اعلان کا بی جے پی سے مطالبہ

رام مندر کی تعمیر کی تاریخ کے اعلان کا بی جے پی سے مطالبہ

سنگھ پریوار پر سیاسی مقاصد کیلئے لارڈ رام کے نام کے استعمال کا الزام : نتیش کمار
پٹنہ۔ 6 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) بہار کے چیف منسٹر نتیش کمار نے آج سنگھ پریوار کو چیلنج کیا کہ ایودھیا میں بڑے رام مندر کی تعمیر کیلئے اگر وہ (سنگھ پریوار) واقعی سنجیدہ ہے تو اس مندر کی تعمیر کی تاریخ کا اعلان کرے۔ نتیش کمار نے الزام عائد کیا کہ بی جے پی اور آر ایس ایس محض انتخابی مفادات کے لئے ’’لارڈ رام‘‘ کے نام کا بیجا استعمال و استحصال کررہے ہیں۔ بابائے دستور آنجہانی بی آر امبیڈکر کی برسی تقاریب کے موقع پر اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ ’’بی جے پی یا آر ایس ایس لارڈ رام پر اعتقاد نہیں رکھتے ۔ وہ صرف انتخابی فائدہ کے لئے وقفہ وقفہ سے اس دیوتا کا نام استعمال کرتے ہیں جو اب عوام کے لئے قابل قبول نہیں ہے‘‘۔ نتیش کمار نے الزام عائد کیا کہ سنگھ پریوار اپنے سیاسی مقصد کے لئے وقفہ وقفہ سے مذہبی جذبات بھڑکا رہا ہے تاکہ سیاسی فوائد کے لئے رام مندر کے مسئلہ کو زندہ رکھا جاسکے۔ چیف منسٹر نے کہا کہ موجودہ حالات میں مندر کا مسئلہ محض اُترپردیش اسمبلی انتخابات پر نظر رکھتے ہوئے اٹھایا جارہا ہے۔ نتیش کمار نے بی جے پی اور آر ایس ایس کے اس نعرہ کا خوب مذاق اُڑایا کہ ’’رام لالہ ہم آئیں گے، مندر وہیں بنائیں گے‘‘۔ اس نعرہ میں اپنی طرف سے ازراہ مذاق یہ فقرہ بھی جوڑ دیا کہ مگر تاریخ نہیں بتائیں گے‘‘۔ اور کہا کہ مندر کی تعمیر کے لئے عوام اب تاریخ کے اعلان کا مطالبہ کررہے ہیں چنانچہ آر ایس ایس اور بی جے پی کو چاہئے کہ ایودھیا میں رام مندر کی تعمیر کیلئے کسی تاریخ کا واضح طور پر اعلان کریں۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی اور آر ایس ایس وقفہ وقفہ سے رام مندر کا مسئلہ اٹھا رہے ہیں حالانکہ ہر کوئی جانتا ہے کہ صرف عدالتی احکام یا فریقوں کے باہمی اتفاق کی بنیاد پر ہی رام مندر کی تعمیر ہوسکتی ہے۔ مندر کی تعمیر کے مسئلہ پر آر ایس ایس سربراہ موہن بھاگوت کے ریمارک کا تذکرہ کرتے ہوئے نتیش کمار نے کہا کہ مندر کی تعمیر کی تاریخ کے اعلان میں ناکامی کے بعد بی جے پی، آر ایس ایس اور اس کی ملحقہ تنظیمیں پوری طرح بے نقاب ہوگئی ہیں۔

TOPPOPULARRECENT