Tuesday , December 12 2017
Home / ہندوستان / رام مندر کے بارے میں سوشل میڈیا پر غلط مہم

رام مندر کے بارے میں سوشل میڈیا پر غلط مہم

آر ایس ایس کا والینٹرس کو خصوصی تربیت دینے کا فیصلہ
نئی دہلی 9 فبروری ( سیاست ڈاٹ کام ) رام مندر مسئلہ پھر اُٹھاتے ہوئے آر ایس ایس نے آج کہاکہ وہ اپنے والینٹرس اور حامیوں کو خصوصی تربیت دے گی تاکہ سوشل میڈیا پر مبینہ غلط مہم کو روکا جاسکے ۔ بی جے پی لیڈر و سابق مرکزی وزیر سبرامنیم سوامی نے جو عدالت میں رام جنم بھومی تحریک مقدمہ میں سرگرم رول ادا کررہے ہیں کہا کہ 20 فبروری کو ایک سمینار منعقد ہوگا جس میں آر ایس ایس کے حامیوں کو تمام اُمور اور امکنات سے واقف کروایا جائیگا ۔ اسکے علاوہ سوشل میڈیا جیسے ٹوئٹر و فیس بک پر اس غلط مہم سے نمٹنے پر بھی توجہ دی جائیگی ۔ یہ سمینار جھنڈے والا میں آر ایس ایس دفتر پر دین دیال ریسرچ سنٹر کی جانب سے منعقد کیا جارہا ہے ۔ اس کا موضوع ’سری رام مندر : اُبھرتے حالات ‘ رکھا گیا ہے ۔ بی جے پی لیڈر نے کہاکہ ایودھیا میں رام مندر کی تعمیر کے بارے میں حقائق کو پیش کیا جائے گا اور آر ایس ایس والینٹرس اور حامیوں کو تربیت دی جائیگی کہ اسے سوشل میڈیا پر غلط مہم کو روکنے میں مدد ملے گی ۔ دہلی کی آر ایس ایس میڈیا انچارج راجیو ٹولی نے کہا کہ اس مسئلہ کو پارلیمنٹ میں قانون سازی یا پھر عدالت کے ذریعہ حل کیا جاسکتا ہے۔ اس کے علاوہ اس کی یکسوئی کا کوئی اور راستہ نہیں ہے ۔ انھوں نے کہاکہ سوشل میڈیا پر غلط اطلاعات پر مبنی مہم چلائی جارہی ہے ۔ انھوں نے کہاکہ عدالتی رضامندی کے بغیر رام مندر کی تعمیر کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا ۔

TOPPOPULARRECENT