Thursday , September 20 2018
Home / ہندوستان / رام نومی جلوس کے دوران تشدد، مغربی بنگال سے مرکز کی رپورٹ طلبی

رام نومی جلوس کے دوران تشدد، مغربی بنگال سے مرکز کی رپورٹ طلبی

نئی دہلی ۔ 28 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) مرکز نے حکومت معربی بنگال سے گذشتہ دو دن کے دوران رام نومی کے جلوسوں کے دوران پیش آئے تشدد و آتشزنی کے واقعات پر رپورٹ طلب کی ہے اور اس صورتحال سے نمٹنے کیلئے اپنی طرف سے اعانت کی پیشکش کی ہے۔ وزارت امورداخلہ نے اپنے ایک مراسلہ میں حکومت مغربی بنگال سے ان واقعات، معمول کے حالات بحال کرنے کیلئے کئے جانے والے اقدامات اور تشدد میں ملوث افراد کے خلاف کی گئی کارروائی کے بارے میں رپورٹ طلب کی ہے۔ وزارت امورداخلہ کے ایک ترجمان نے کہا کہ اس ریاست کے چند اضلاع میں جاری تشدد و کشیدگی کی اطلاعات کی روشنی میں نیم فوجی فورسیس کی اعانت کی پیشکش بھی کی۔ پرولیہ، مرشدآباد، بردھمان مغربی اور رانی گنج کے بشمول مغربی بنگال کے مختلف مقامات پر رام نوامی جلوسوں کے دوران پیش آئے پرتشدد واقعات میں کم سے کم دو افراد ہلاک اور دیگر ایک درجن زخمی ہوگئے تھے جن میں چند کی حالت تشویشناک بتائی گئی ہے۔ ان واقعات میں کئی پولیس ملازمین زخمی ہوئے ہیں۔ علاقہ رانی گنج میں جھڑپ کے دوران ہجوم کی جانب سے بم پھینکے جانے کے سبب ایک سینئر پولیس افسر اپنے ہاتھ سے محروم ہوا ہے۔

TOPPOPULARRECENT