Friday , September 21 2018
Home / سیاسیات / راہول وزیراعظم بنے تو مودی جیل میں نظر آئیں گے : بینی پرساد ورما

راہول وزیراعظم بنے تو مودی جیل میں نظر آئیں گے : بینی پرساد ورما

بلرام پور (یوپی) ۔ 4 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) کانگریس قائد اور مرکزی وزیر بینی پرساد ورما نے آج ایک اشتعال انگیز بیان دیتے ہوئے نریندر مودی کو انتباہ دیا کہ اگر راہول گاندھی ملک کے وزیراعظم بن گئے تو اندرون 6 ماہ مودی جیل میں نظر آئیں گے۔ انہوں نے مودی کو ’’ڈکٹیٹر‘‘ قرار دیتے ہوئے اپوزیشن سیاسی جماعتوں کو بھی تنقید کا نشانہ بنایا اور ک

بلرام پور (یوپی) ۔ 4 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) کانگریس قائد اور مرکزی وزیر بینی پرساد ورما نے آج ایک اشتعال انگیز بیان دیتے ہوئے نریندر مودی کو انتباہ دیا کہ اگر راہول گاندھی ملک کے وزیراعظم بن گئے تو اندرون 6 ماہ مودی جیل میں نظر آئیں گے۔ انہوں نے مودی کو ’’ڈکٹیٹر‘‘ قرار دیتے ہوئے اپوزیشن سیاسی جماعتوں کو بھی تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ اب یہ ہر ہندو اور مسلمان کا فرض ہیکہ وہ ملک کی جمہوریت کو کتوں کے حوالے نہ کریں اور اسے بچائیں۔ مودی ایک ڈکٹیٹر ہے

اور کوئی بھی ڈکٹیٹر ملک کا وزیراعظم نہیں بن سکتا۔ بی جے پی جو چاہتی ہے وہ کرے… چاہے تو بلند بانگ دعوے کرے، چاہے تو میڈیا کو خرید لے لیکن مودی کبھی بھی ملک کے وزیراعظم نہیں بن سکتے۔ گذشتہ شب اخباری نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے یہ بات کہی۔ بینی پرساد ورما نے ایک بار پھر اپنی بات دہراتے ہوئے کہا کہ راہول گاندھی اگر وزیراعظم بن گئے تو مودی جیل میں نظر آئیں گے کیونکہ وہ گجرات کے مسلم کش فسادات کے ملزم ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ بی جے پی ایک ایسی پارٹی ہے جہاں مودی کو اوپر اٹھانے کیلئے پارٹی کے کئی سینئر ارکان کو نظرانداز کرتے ہوئے ان کی توہین کی گئی۔ انہوں نے ان قیاس آرائیوں کو مسترد کردیا کہ پارٹی وارانسی سے ایک مشترکہ امیدوار کو کھڑا کرنے والی ہے بلکہ پارٹی ایک مضبوط امیدوار کو انتخابی میدان میں اتارے گی جس کا عنقریب فیصلہ کیا جائے گا۔ بعدازاں گونڈہ میں اتھیاٹھوک ٹاؤن شپ میں ایک انتخابی ریالی سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے مودی اور ملائم کو سیکولرازم کا زبردست دشمن قرار دیا۔ بینی پرساد ورما اس حلقہ سے دوبارہ انتخابات لڑ رہے ہیں جہاں انہیں بی ایس پی کے اکبر احمد ڈمپی اور پیس پارٹی کے منصور خان کے علاوہ بی جے پی سے بھی سہ رخی مقابلے کا سامنا ہے۔ مذکورہ ٹاؤن شپ میں مسلمان ووٹرس کی بھی قابل لحاظ تعداد موجود ہے۔ انہوں نے مسکراتے ہوئے کہا کہ اس الیکشن کی ایک خاص خوبی یہ ہیکہ جسے دیکھو وہ وزیراعظم بننے کیلئے پر تول رہا ہے۔

TOPPOPULARRECENT