Sunday , November 19 2017
Home / ہندوستان / رضامندی کیساتھ جسمانی تعلقات بھی عصمت ریزی : سپریم کورٹ

رضامندی کیساتھ جسمانی تعلقات بھی عصمت ریزی : سپریم کورٹ

نئی دہلی ۔ 24 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) دہلی کی ایک عدالت نے آج کہا کہ دھوکہ دہی کی بنیاد پر جسمانی تعلقات کیلئے خاتون کی رضامندی بھی ’عدم رضامندی‘ ہوتی ہے۔ قانون کی نظر میں اس بنیاد پر کسی مرد اور عورت کے درمیان استوار کئے جانے والے جسمانی تعلقات عصمت ریزی کے مترادف ہوتے ہیں۔ اس عدالت نے ملزم مرد کو عصمت ریزی کے جرم کا مرتکب قرار دیتے ہوئے کہا کہ متاثرہ عورت نے غلط باور کرائے جانے پر پہل کی تھی جو دراصل رضاکارانہ اجازت نہیں تھی کیونکہ ملزم نے اس کو یہ غلط باور کرایا تھا کہ وہ غیر شادی شدہ ہے اور متعلقہ عورت اپنے شوہر طلاق لینے کے بعد شادی کرنا چاہتا ہے اس بنیا دپر ہی متاثرہ عورت نے پہل کی تھی ۔

TOPPOPULARRECENT