رنز کے لئے صرف کوہلی پر انحصار نہیں:پجارا

ایڈیلیڈ۔3 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام )ہندوستانی ٹیم اس وقت اپنے کپتان اور دنیا کے نمبر ایک بیٹسمین ویراٹ کوہلی پر بہت حد تک منحصر ہے لیکن ٹیم کے ایک اور تجربہ کار بیٹسمین چتیشور پجارا کا خیال ہے کہ ہندستان کا صرف ایک بیٹسمین پر انحصار نہیں ہے ۔آسٹریلیا کے خلاف 6 ڈسمبر کو ایڈیلیڈ اوول میں شروع ہورہے پہلے ٹسٹ سے قبل مسٹر وال پجارا سے یہاں پریس کانفرنس میں جب یہ پوچھا گیا کہ کیا ہندوستانی بیٹنگ کپتان کوہلی پر منحصر ہے تو انہوں نے کہاکہ ہم سب ٹیم کی طرح کھیلتے ہیں اور ایک یونٹ کی طرح بیٹنگ کرتے ہیں، اس سے زیادہ یا کم دباؤ نہیں ہوتا ہم صرف اچھا کرنا چاہتے ہیں، ہمارے تمام بیٹسمینس تجربہ کارہیں اور انہیں اپنی صلاحیت پر بھروسہ ہے ۔ انہوں نے کہاکہ ہمارے ہر بیٹسمینوں کی کوشش صرف میدان پر آکر ٹیم کے لئے رنز بنانا ہوتی ہے اور وہ اپنے کام کو اچھی طرح کرتے ہیں۔ اس طرح بیٹنگ یونٹ پرکوئی دباؤ پڑتا ہے ۔ ہم رنز کیلیے کبھی کسی ایک کھلاڑی پر بالکل منحصر نہیں ہیں۔ کوہلی دنیا کے نمبر ایک ٹسٹ بیٹسمین ہیں اور کئی بار ٹیم رنز کے لئے صرف اپنے کپتان پر منحصر رہتی ہے ۔ کوہلی نے پریکٹس میچ میں بھی اچھا مظاہرہ کیا اور64 رنز بنا کر پرتھوی شا(66) کے بعد دوسرے ٹاپ اسکورر رہے تھے ۔ پرتھوی ٹخنے میں چوٹ کی وجہ سے پہلے ٹسٹ سے باہر ہو گئے ہیں۔ پجارا نے بھی پریکٹس مقابلے میں54 رنز کی نصف سنچری اننگزکھیلی تھی۔ ہندستانی ٹیم چار ٹسٹ میچوں کی سیریز سے پہلے خاص مشق نہیں کر سکی ہے اور اس کا چار روزہ واحد پریکٹس میچ بھی بارش سے متاثر رہا ہے ۔ پجارا نے کہا کہ ان کی ٹیم کم پریکٹس سے فکر مند نہیں ہے اور تمام کھلاڑی اس سطح پر ٹریننگ کر رہے ہیں اور ٹیم ایک دن کے آرام کے بعد میچ سے پہلے دو دن پھر سخت مشق کرے گی۔ ہندستانی ٹیم کی پراکٹس مقابلے میں بیٹنگ آرڈر جہاں مضبوط لگا وہیں بولروں نے مایوس کیا اور کافی مہنگے ثابت ہوئے ۔ پجارا نے کہا کہ ہندستان کے پاس فی الحال بہترین تیز بولنگ شعبہ ہے ۔ انہوں نے کہاکہ ہمیں اس بات کی فکر نہیں ہے کہ پریکٹس مقابلے میں بولروں کی کارکردگی کمزور تھی۔ ہمارے پاس تجربہ کار بولر ہیں جن میں سے کچھ 2015 کی سیریز میں بھی کھیل چکے ہیں۔ پجارا نے ساتھ ہی کہاکہ ہمارے پاس فی الحال بہترین تیز بولنگ ہے اور ہمیں ان پر اعتماد ہے ۔ مجھے لگتا ہے کہ انڈین پریمیئر لیگ نے بھی ہمارے لیے اچھے فاسٹ بولر پیدا کئے ہیں جس سے اب ہندوستانی ٹیم کو بھی فائدہ ہو رہا ہے ۔ ہمارے پاس بہترین بنچ اسٹرینتھ بھی ہے اس لئے کسی کے زخمی ہونے سے ہمارے کھیل پر اثر نہیں پڑے گا۔ آسٹریلیا کی اچھال بھری پچوں پر سب کی نگاہیں تجربہ کارآف اسپنر روی چندرن اشون پر بھیمرکوز ہیں۔ پجارا نے کہاکہ اشون نے اپنی بولنگ میں کافی تبدیلی کی۔

TOPPOPULARRECENT