Saturday , November 25 2017
Home / کھیل کی خبریں / روس: الزامات کے بعد ڈوپنگ لیباریٹری بند

روس: الزامات کے بعد ڈوپنگ لیباریٹری بند

واڈا کمیشن کی حیران کن رپورٹ کے بعد روس کا پہلا دفاعی اقدام ۔ روسی ایجنسی کی بہرحال مدافعت
ماسکو ، 11 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) روس نے ورلڈ اینٹی ڈوپنگ ایجنسی(واڈا) کی جانب سے معطل کئے جانے کے بعد ملک کی ڈوپنگ لیبارٹری کو بند کردیا ہے۔ روسی اینٹی ڈوپنگ ایجنسی کے سربراہ نکیتا کمیوف کا کہنا ہے کہ لیباریٹری کی سرگرمیاں بند کر دی گئی ہیں۔ انھوں نے بتایا کہ ورلڈ اینٹی ڈوپنگ ایجنسی کے تمام احکامات کی مکمل تعمیل کی گئی۔ روسی اتھلیٹس پر واڈا کمیشن کی چونکا دینے والی رپورٹ میں منظم ڈوپنگ الزامات کے بعد روس کی جانب سے یہ پہلا دفاعی بیان ہے۔ اس سے قبل کریملن کے ترجمان دیمتری پیسکوف نے ان الزامات کو بے بنیاد قرار دیا تھا۔ نکیتا کمیوف نے کہا کہ رپورٹ کے ذرائع کی ساکھ پر سوالات کھڑے ہوگئے ہیں کیونکہ جن لوگوں کو شامل کیا گیا ہے وہ خود ڈوپنگ ٹسٹ میں ناکام ہوئے تھے۔ انھوں نے مزید کہا : ’’جب ایک ایسا کھلاڑی جس نے کئی دفعہ قانون توڑا اور نااہل قرار پایا اور جس کے الفاظ ہمارے الفاظ سے بھاری ہوں تو سوالات ضرور اٹھتے ہیں۔‘‘ ان کا یہ بھی کہنا ہے کہ روس کھیلوں کو شفاف بنانے کیلئے گامزن رہا ہے اور ایجنسی ان کی سربراہی میں بڑی مؤثر سرگرمیاں انجام دے رہی ہے۔ انھوں نے کہاکہ مسائل ہیں لیکن حقائق اور اعداد وشمار بتارہے ہیں کہ روسی اینٹی ڈوپنگ ایجنسی مؤثر کام انجام دے رہی ہے، اس ایجنسی نے دنیا میں سب سے زیادہ سزائیں دی ہیں۔ واضح رہے کہ دو روز قبل واڈا کے تحقیقاتی کمیشن نے روس میں بڑے پیمانے پر ڈوپنگ اور کرپشن کی نشاندہی کرتے ہوئے روسی اتھلیٹس کو تمام مقابلوں بشمول 2016ء اولمپکس سے بھی معطلی کی سفارش کی تھی۔ کمیشن نے اپنی رپورٹ میں کہا تھا کہ روس میں ڈوپنگ کے معاملات حکومت کی رضامندی کے بغیر ممکن نہیں تھے۔

TOPPOPULARRECENT