Wednesday , December 12 2018

روس کا طیارہ آسمان میں شعلہ پوش ، 71 ہلاک

ماسکو 11 فبروری ( سیاست ڈاٹ کام ) روس کی سراطو ائرلائینس سے تعلق رکھنے والا ایک مسافر بردار طیارہ آج ماسکو کے قریب حادثہ کا شکار ہوگیا جس کے نتیجہ میں اس پر سوار تمام 71 افراد ہلاک ہوگئے ۔ خبر رساں ایجنسیوں نے یہ اطلاع دی ۔ ایجنسی تاس نے اطلاع دی ہے کہ طیارہ پر 65 مسافرین اور عملہ کے چھ ارکان سوار تھے ۔ یہ طیارہ اڑان بھرنے کے 10 منٹ بعد ہی راڈار سے غائب ہوگیا تھا ۔ طیارہ نے ماسکو کے ڈومودیدوف ائرپورٹ سے اڑان بھری تھی ۔ یہ طیارہ ماسکو سے اورسک جارہا تھا جو قزاقستان کی سرحد کے قریب واقع ہے ۔ روسی سرکاری ٹی وی نے ایک برفیلے علاقے میں طیارہ کے ملبہ کو دکھایا ۔ خبر رساں ادارہ نے ذرائع کے حوالہ سے کہا کہ طیارہ کا ملبہ دستیاب ہوگیا ہے اور کوئی بھی زندہ نہیں بچا ہے ۔ ابھی یہ فوری پتہ نہیں چل سکا ہے کہ حادثہ کی وجہ کیا رہی ہے ۔ روسی وزارت ٹراسنپورٹ کی جانب سے مختلف وجوہات بشمول موسمی حالات کا بھی جائزہ لیا جا رہا ہے ۔ خبر رساں ادارہ کے بموجب پائلٹ کی غلطی کا امکان بھی مسترد نہیں کیا گیا ہے ۔ عینی شاہدین نے بتایا کہ ماسکو کے مضافات میں واقع موضع میں لوگوں نے دیکھا کہ طیارہ آسمان میں شعلہ پوش ہوگیا ہے اور جلتا ہوا طیارہ زمین پر آگرا ۔ صدر ولادیمیر پوٹین نے اس حادثہ میں ہلاک مسافروں کے رشتہ داروں سے اظہار تعزیت کیا ۔ روس کے ٹیلی ویژن نے مقام حادثہ کی ویڈیو بتائی جس میں برفیلی چٹانوں پر طیارہ کا ملبہ بکھرا پڑا دکھایا گیا ہے ۔ روس میں حالیہ دنوں میں شدید برفباری ریکارڈکی گئی ہے اور راستہ صاف نہ دکھائی دینے پر حادثہ کا امکان ظاہر کیا گیا ہے ۔ حادثہ کا شکار روسی طیارہ کو 7 سال قبل ہی ایک اور روسی ایرلائین سے خریدا گیا تھا ۔

TOPPOPULARRECENT