Wednesday , December 19 2018

روٹومیک کے مالک سے سی بی آئی ہیڈکوارٹرس میں پوچھ گچھ

کانپور میں ابتدائی پوچھ گچھ کے بعد دہلی طلبی، تفصیلات کے انکشاف سے گریز
نئی دہلی21 ۔ فبروری (سیاست ڈاٹ کام) سی بی آئی نے روٹومیک کے مالک وکرم کوٹھاری سے سات قومیائے ہوئے بینکوں کے کنزوریشم سے حاصل کردہ 3,695 کروڑ روپئے کے قرض کی مبینہ نادہندگی و دھوکہ دہی کے ضمن میں آج سے اپنے ہیڈکوارٹرس پر پوچھ گچھ شروع کردی۔ سی بی آئی عہدیداروں نے یہ اطلاع دیتے ہوئے مزید کہا کہ وکرم کوٹھاری سے گذشتہ روز اترپردیش کے شہر کانپور میں پوچھ گچھ کی تھی جہاں ان کی رہائش گاہ اور کمپنی واقع ہے۔ عہدیداروں نے کہا کہ ایجنسی کی طرف سے انہیں یہاں طلب کیا گیا تھا اور اپنے ہیڈکوارٹرس پر ان سے پوچھ گچھ شروع کی گئی۔ تاہم اس اقدام کی وجوہات نہیں بتائی گئیں۔ وکرم کوٹھاری کے علاوہ ان کی بیوی سادھنا اور بیٹے راہول جو تمام روٹومیک گلوبل پرائیویٹ لمیٹیڈ کے ڈائرکٹرس ہیں، مبینہ طور پر ان بینک قرضوں کو دیگر مقاصد کی طرف مستقل کردیا تھا۔ کنزوریشم کی ایک رکن بینک آف بڑودہ نے سی بی آئی سے رجوع ہوکر کوٹھاری کے خلاف ایف آئی آر درج کرنے کی درخواست کی تھی کیونکہ یہ بینک عملاً اس بات پر خوفزدہ تھی کہ وہ (کوٹھاری) بھی ملک سے فرار ہوسکتا ہے۔ شکایت کی وصولی کے بعد سی بی آئی نے 18 فبروری کو مقدمہ درج کیا تھا۔ ابتداء میں اس اسکام کا تخمینہ 800 کروڑ روپئے کیا گیا تھا لیکن سی بی آئی کی جانب سے رٹومیک کھاتوں کی تحقیقات کے بعد پتہ چلا کہ کمپنی بینک آف انڈیا، بینک آف مہاراشٹرا، انڈین اوورسیز بینک، یونین بینک آف انڈیا، الہ آباد بینک اور اورینٹل بینک آف کامرس سے بھی قرض حاصل کی تھی۔

فرضی کمپنیوں کے خلاف دھاوے
145 کروڑ روپئے کے اثاثہ جات قرق
نئی دہلی ۔ 21 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) انفورسمنٹ ڈائرکٹریٹ (ای ڈی) نے آج ملک بھر میں 17 مختلف مقامات پر فرضی کمپنیوں کے خلاف دھاوے کئے جبکہ محکمہ انکم ٹیکس نے 11,400 کروڑ روپئے کے مبینہ پنجاب نیشنل بینک (پی این بی) فراڈ میں 145 کروڑ روپئے مالیت کے اثاثہ جات قرق کردیئے۔ یہ دھاوے ممبئی اور دیگر مقامات پر کئے گئے۔ ای ڈی نے آج 10 کروڑ روپئے کے اثاثہ جات ضبط کئے ہیں جبکہ انکم ٹیکس ڈپارٹمنٹ نے 141 بینک کھاتوں کو قرق کرلیا ہے جن کا تعلق نیرو مودی گروپ سے ہے۔ آج کی ضبطی کے ساتھ ای ڈی کی جانب سے ضبط شدہ جواہرات اور طلائی زیورات کی جملہ قدر 5,736 کروڑ روپئے ہوگئی ہے۔ اس دوران سی بی آئی نے آج ممبئی کے قریب علی باغ علاقہ میں نیرو مودی کی لکژری پراپرٹی مہربند کردی۔ 1.5 ایکر پر پھیلا ہوا فام ہاؤس اب سی بی آئی کی نگرانی میں آ چکا ہے۔ دریں اثناء وپل امبانی اور پانچ دیگر کو ممبئی کی خصوصی عدالت نے 5 مارچ تک سی بی آئی تحویل میں بھیج دیا۔

TOPPOPULARRECENT