Tuesday , November 21 2017
Home / اضلاع کی خبریں / روہت خودکشی واقعہ کی اعلی سطحی تحقیقات کا مطالبہ

روہت خودکشی واقعہ کی اعلی سطحی تحقیقات کا مطالبہ

محبوب نگر /25 جنوری ( ذریعہ فیاکس ) حیدرآباد سنٹرل یونیورسٹی میں پیش آئے واقع کے متعلق اسٹوڈنٹس اسلامک آرگنائزیشن آف انڈیا ملک گیر سطح پر احتجاج منظم کرے گی ۔ روہت ویمولہ کے خاندان کو انصاف اور مجرمین کو سزا دلوانے کیلئے حکومت پر دباؤ ڈالے گی ۔ روہت ویمولہ ایک دلت طالب علم تھا جو مستقبل کا معمار بن سکتا تھا ۔ یونیورسٹی انتظامیہ نے اس کی فیلوشپ پر روک لگادی تھی ۔ وہ 1,75,000/- روپئے کی فیلوشپ اس کے خاندان کو ادا کئے جائیں ۔ موجودہ مرکزی حکومت کے دوران عدم رواداری کے واقعات میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے ۔ ان حالات میں بی سی ، ایس سی ، ایس ٹی اتحاد کے ذریعہ ایسا متحدہ مظاہرہ ہونا چاہئے کہ روہت کا یہ قتل آخری قتل ہو اور آنے والے دور میں ہر ذات اور فرقے کا فرد محفوظ رہے ۔ اے بی وی پی کے قائدین جو اس واقعے میں ملوث رہے انہیں بغیر کوئی ذہنی تحفظ کے سزا دینی چاہئے اور اس واقعہ کی اعلی سطحی جانچ ہونی چاہئے ۔ یونیورسٹی کے وائس چانسلر کو معطل کیا جانا چاہئے ۔ ان خیالات کا اظہار برادر محمد اظہر الدین ریاستی سکریٹری برائے رابطہ عامہ نے شہر محبوب نگر میں منعقدہ راؤنڈ ٹیبل میٹ سے کیا ۔ جسے ایس آئی او محبوب نگر نے آر اینڈ بی گیسٹ ہاوز پر منعقد کیا تھا ۔ اس اجلاس سے ڈاکٹر شیخ سیادت علی ، محمد واجد علی عارف مقامی صدر ایس آئی او ، کرو مورتی سی پی آئی ، قدوس بیگ مسلم لیگ ، ابرار بیگ ڈبلیو پی آئی شجاعت علی جماعت اسلامی امیر مقامی اور دیگر سماجی اور سیاسی تنظیمیوں کے قائدین نے اس احتجاج کو منظم کرنے کی خواہش کی ۔ محمد ایوب ضلعی صدر ایس آئی او نے نظامت کے فرائض انجام دئے ۔

TOPPOPULARRECENT