Saturday , December 15 2018

روہنگیا مسلمانوں کو واپس بھیجنے کا فیصلہ

سپریم کورٹ میں 18 ستمبر کو سماعت
نئی دہلی ۔11 ستمبر۔( سیاست ڈاٹ کام ) سپریم کورٹ نے روہنگیاکے غیرقانونی طورپر مقیم مسلم تارکین کو مائینمار واپس بھیجنے مرکز کے فیصلے کو چیلنج کرتے ہوئے دائر کردہ درخواست کی سماعت 18 ستمبر کو مقرر کی ہے ۔ چیف جسٹس دیپک مشرا ، جسٹس اے ایم کھنویل کر اور جسٹس ڈی وائی چندر چوڑ پر مشتمل بنچ نے ایڈیشنل سالیسٹر جنرل تشار مہتا کی جو مرکز کی نمائندگی کررہے ہیں سماعت ملتوی کرنے کی د رخواست کو قبول کرلیا ۔ حکومت کے فیصلے کو مختلف وجوہات بشمول بین الاقوامی انسانی حقوق کنونشن کی خلاف ورزی قرار دیتے ہوئے چیلنج کیا گیا ہے۔ سپریم کورٹ نے اس سے پہلے ایڈیشنل سالیسٹر جنرل سے حکومت کا جواب طلب کیا تھا۔ روہنگیا کے دو تارکین وطن محمد سلیم اﷲ اور محمد شاکر نے یہ درخواست دائر کی ہے ۔

 

Top Stories

TOPPOPULARRECENT