Wednesday , December 13 2017
Home / Top Stories / روہنگیا مسلم پناہ گزینوں کی تعداد 4 لاکھ سے متجاوز

روہنگیا مسلم پناہ گزینوں کی تعداد 4 لاکھ سے متجاوز

 

اقوام متحدہ۔ 20 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) میانمار میں تشدد سے جان بچا کر بنگلہ دیش پہنچنے والے روہنگیا پناہ گزینوں کی تعداد چار لاکھ سے تجاوز کرنے کے پیش نظر اقوام متحدہ کی ایجنسیوں نے در بدر ہونے والے لوگوں کی امداد کے لئے کوششیں تیز کررہی ہیں۔اقوام متحدہ کے نیوز سینٹر سے جاری ہوئے بیان کے مطابق سکریٹری جنرل انٹونیو گتیریس نے امدادی سرگرمیاں تیز کرنے کی اپیل کے ساتھ ہی بحران کو حل کرنے کے میانمار کے حکام سے فوری اقدامات کرنے کا اپنا مطالبہ دوہرایا ہے ۔ مسٹر انٹونیو گتیریس نے گزشتہ روز جنرل اسمبلی میں اس مسئلہ پر اعلی سطح کی بحث کے افتتاحی خطاب میں کہا کہ میانمار کے جنوبی صوبہ راکھین میں میں نسلی تشدد اور کشیدگی میں ڈرامائی اضافہ پر ہم سب حیران ہیں۔ نہتے لوگوں پر ظلم و زیادتی، امتیازی سلوک، ظالمانہ تعصب اور پر تشدد جارحیت کا دور جاری رہنے کی وجہ سے چار لاکھ سے زیادہ مجبور افراد در بدر ہوگئے ہیں، جس سے علاقائی استحکام کو خطرہ لاحق ہوگیا ہے “۔ انہوں نے میانمار کے حکام سے فوری طورپر فوجی مہم بند کرنے ، انسانی امدادی کارکنوں کو بلا روکاوٹ متاثر ین تک رسائی دینے اور بے گھر ہونے والے افراد کو سلامتی اور احترام کے ساتھ اپنے گھروں میں واپس لوٹنے کا حق دینے پر زور دیا۔ انہوں نے میانمار کی حکومت سے روہنگیا آبادی کے مسئلہ کو حل کرنے کا بھی مطالبہ کیا جو کافی طویل عرصے سے حل طلب ہے ۔ مستقل بین الاقوامی تحقیقاتی مشن برائے میانمار کے چیئر پرسن مرزوقی دارسومان نے جینوا میں اقوام متحدہ کی حقوق انسانی کونسل سے کہا کہ اب یہ واضح ہوچکا ہے کہ میانمار میں سنگین انسانی بحران پیدا ہوا ہے ، جو فوری توجہ کا متقاضی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ 25 اگست سے اب تک 4لاکھ سے زیادہ افراد میانمار سے بھاگ کر بنگلہ دیش میں پناہ لے چکے ہیں اور روہنگیا آبادی کی 200 بستیوں کو مکمل خالی کرکے برباد کردیئے جانے کی اطلاع ہے ۔

TOPPOPULARRECENT