Sunday , September 23 2018
Home / شہر کی خبریں / ریاستوں کو تحفظات کے اختیارات دینے کا مطالبہ

ریاستوں کو تحفظات کے اختیارات دینے کا مطالبہ

دستور میں 50 فیصد کی شرط نہیں، مرکزی ترمیم سے اضافہ ممکن: کے سی آر
حیدرآباد ۔ 14 ۔مارچ (سیاست نیوز) چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے کہا کہ تحفظات کے فیصد میں اضافہ کیلئے دستور میں ترمیم ضروری ہے اور یہی وجہ ہے کہ وہ تحفظات کے اختیارات ریاستوں کو سونپنے کا مطالبہ کر رہے ہیں۔ اسمبلی میں گورنر کے خطبہ پر تحریک تشکر مباحث کا جواب دیتے ہوئے چیف منسٹر نے بی جے پی اور تلگو دیشم ارکان کے اس استدلال کو مسترد کردیا کہ ریاستی حکومت جی او کی اجرائی کے ذریعہ تحفظات پر عمل کرسکتی ہے۔ چیف منسٹر نے کہا کہ سابق میں اس طرح کی کوششوں کو ہائی کورٹ نے فوری کالعدم کردیا تھا ۔ لہذا انہوں نے اسمبلی میں منظورہ بل مرکز کو روانہ کیا ہے ۔ چیف منسٹر نے کہا کہ اگر حکومت جی او کے ذریعہ تحفظات فراہم کرتی ہے تو عدالت سے رکاوٹ کا اندیشہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ 50 فیصد سے زیادہ تحفظات کی فراہمی ریاستی حکومت کے تحت نہیں ہے۔ یہی وجہ ہے کہ ٹی آر ایس ارکان پارلیمنٹ دہلی میں جدوجہد کر رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ مرکز نے سپریم کورٹ کی جانب سے 50 فیصد کی شرط کا حوالہ دیتے ہوئے تلنگانہ کے بل کو منظوری سے روک دیا ہے۔ دستور میں 50 فیصد کی شرط کا کہیں ذکر نہیں ہے۔ دستور کی دفعہ 16 میں ترمیم کے ذریعہ مرکز تحفظات فراہم کرسکتا ہے اور ہم دستوری ترمیم کی مانگ کر رہے ہیں۔ تحفظات کی فراہمی، درج فہرست اقوام کو انصاف دلانے اور دیگر اہم مسائل کے حل کیلئے میں قومی سیاست میں حصہ لے رہا ہوں۔ تلگو دیشم کے آر کرشنیا اور بی جے پی کے ڈاکٹر لکشمن اور کشن ریڈی نے بی سی اور ایس ٹی تحفظات کا ذکر کیا۔ انہوں نے مسلم تحفظات کا حوالہ نہیں دیا۔ چیف منسٹر نے اپنے جواب میں بھی مسلم تحفظات کے بجائے صرف تحفظات کا لفظ ادا کیا۔

TOPPOPULARRECENT