Thursday , December 13 2018

ریاست آندھرا پردیش کی ترقی کیلئے مرکزی حکومت سے تعاون کا تیقن

نئے دارالحکومت کے لیے 2 ہزار کروڑ کی عنقریب اجرائی ، مرکزی وزیر سوجنا چودھری کا بیان

نئے دارالحکومت کے لیے 2 ہزار کروڑ کی عنقریب اجرائی ، مرکزی وزیر سوجنا چودھری کا بیان
حیدرآباد۔/23جنوری، ( سیاست نیوز) مرکزی وزیر سوجنا چودھری نے واضح کیا کہ مرکزی حکومت آندھرا پردیش ریاست کی ہمہ جہتی ترقی کیلئے ہر ممکن تعاون کرے گی۔ مملکتی وزیر سائنس و ٹکنالوجی سوجنا چودھری جن کا تعلق تلگودیشم پارٹی سے ہے آج آندھرا پردیش سکریٹریٹ میں اخباری نمائندوں سے بات چیت کررہے تھے۔ آندھرا پردیش کیلئے خصوصی ریاست کا عہدہ حاصل کرنے سے متعلق سرگرمیوں کا حوالہ دیتے ہوئے سوجنا چودھری نے کہا کہ مرکز اگر آندھرا پردیش کو خصوصی موقف عطا نہ بھی کرے تو وہ دیگر ذرائع سے آندھرا پردیش کی ترقی میں تعاون کرے گا۔ انہوں نے کہا کہ پسماندہ علاقوں کی ترقی کیلئے مرکز کی جانب سے مناسب امداد فراہم کی جائے گی۔ انہوں نے بتایا کہ آندھرا پردیش کے نئے دارالحکومت کی تعمیر کیلئے مرکزی حکومت آئندہ 15دنوں میں مرحلہ وار انداز میں 2000کروڑ روپئے جاری کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ آندھرا پردیش کو مرکز کی جانب سے حاصل ہونے والی تمام امداد اور گرانٹ کے حصول کیلئے وہ مساعی کریں گے۔ انہوں نے واضح کیا کہ آندھرا پردیش تنظیم جدید بل میں آندھرا پردیش کیلئے جو رعایتوں کا اعلان کیا گیا ہے مرکز کی جانب سے ان سے انحراف کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا۔ مرکز قانون میں طئے کی گئی تمام مراعات آندھرا پردیش کو فراہم کرے گی جس میں ریاست کی ترقی اور نئے دارالحکومت کی تعمیر کیلئے امداد شامل ہے۔ انہوں نے بتایا کہ نئے دارالحکومت میں سکریٹریٹ، اسمبلی، ہائی کورٹ اور دیگر اہم سرکاری عمارتوں کی تعمیر کیلئے مرکز امداد فراہم کرے گا۔ اسی طرح آندھرا پردیش تنظیم جدید بل میں ایمس کے قیام، وشاکھاپٹنم، چینائی انڈسٹریل کاریڈور، آئی آئی ایم، آئی آئی ٹی، این آئی ٹی، ٹریپل آئی ٹی، سنٹرل یونیورسٹی، ٹرائیبل یونیورسٹی، آئی او سی ریفائنری اور دیگر اداروں کے قیام کے سلسلہ میں جو وعدہ کیا گیا ہے ان پر مرکز بہر صورت عمل کرے گا اور مذکورہ اداروں کے قیام کیلئے قدم اٹھائے جائیں گے۔سوجنا چودھری نے بتایا کہ لوک سبھا کے آنے والے بجٹ اجلاس میں آندھرا پردیش کیلئے علحدہ ریلوے زون کے قیام کو منظوری دی جائے گی۔ سوجنا چودھری نے کہا کہ آندھرا پردیش حکومت بین الاقوامی معیار کا دارالحکومت قائم کرنے کے اقدامات کررہی ہے اور اس سلسلہ میں مختلف ترقیافتہ ممالک سے تعاون حاصل کیا جارہا ہے۔

TOPPOPULARRECENT