Tuesday , November 21 2017
Home / شہر کی خبریں / ر500 او 1000 کے نوٹوں کی کم قیمت میں خریدی کا بازار گرم

ر500 او 1000 کے نوٹوں کی کم قیمت میں خریدی کا بازار گرم

شہر کے گنجان آبادی والے علاقوں میں غریب عوام ہراساں۔ منافع خوروں کی چاندی
حیدرآباد۔8نومبر (سیاست نیوز) شہر میں 1000اور 500کے نوٹوں کے چلن کے بند ہونے کی اطلاع کے عام ہوتے ہی نوٹوں کی کم قیمت میں فروخت کا عمل شروع ہوگیا اور مفاد پرستوں نے اس فیصلہ سے پور فائدہ اٹھا کر 1000کی نوٹ 800 اور 500کی نوٹ 400میں خریدنی شروع کردی جسکے سبب معصوم غریب عوام نے اپنی رقومات کی فروخت شروع کردی ان نوٹوں کے متعلق حکومت کے اچانک اعلان کا نقصان ان غریب خاندانوں کو ہوا جنہوں نے بینکوں میں کھاتے نہ ہونے کی بنا پر گھروں میں ہی 1000یا 500کے نوٹ رکھے تھے۔ وزیر اعظم کے اعلان کے فوری بعد پیدا صورتحال کے سبب شہر کے کئی سلم علاقوں میں غریب عوام کو ہراسانی کا سلسلہ شروع ہو گیا اور لوگ لا شعوری کے عالم میں ادھر ادھر دوڑنے لگے تاکہ اپنے 1000اور 500روپئے کے نوٹوں کو تبدیل کروایا جا سکے۔ پرانے شہر کے کئی سلم علاقوں اور پسماندہ و ناخواندہ آبادیوں میں چند مفاد پرستوں نے نوٹوں کی تبدیلی کے اس کاروبار کو خوب ہوا دی ۔ شہر کے کئی علاقوں میں رات دیر گئے تک عوام میں بے چینی دیکھی گئی ۔جن لوگوں کے پاس 100کے یا 50کے نوٹ موجود ہیں ان لوگوں نے حالات کے اعتبار سے بڑی نوٹ خریدنی شروع کردی ۔ شہرکے علاوہ اضلاع سے اطلاعات موصول ہونے لگیں کہ ہاںں بھی نوٹوں کی خرید کا عمل شروع ہونے لگا اور انکم ٹیکس ادا کرنے والے اور بینکوں میں کھاتہ رکھنے والوں نے جن کے پاس 100کے نوٹ موجود ہیں اس کاروبار کو خوب ہوا دی۔ پرانے شہر کے علاقوں میں بعض مقامات پر پولیس کو شکایات موصول ہوئیں کہ کرنسی نوٹ جو کہ لیگل ٹنڈر کی حیثیت رکھتی ہے اس کے قبول کرنے سے انکار کرنا شروع کر دیا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT