Thursday , November 23 2017
Home / کھیل کی خبریں / زخمی فلسطینی بچے کو ریئل میڈرڈ ٹیم سے ملاقات کی دعوت

زخمی فلسطینی بچے کو ریئل میڈرڈ ٹیم سے ملاقات کی دعوت

راماللہ۔16مارچ۔ (سیاست ڈاٹ کام) فلسطین کے علاقے مغربی کنارے میں انتہا پسند یہودی آباد کاروں کے حملے میں آتشزگی کے باعث اپنے 18 ماہ کے بھائی، والد اور والدہ کو کھو دینے والے ایک 5 سالہ فسلطینی بچے کو اسٹار فٹ بالر کرسٹیانو رونالڈو سمیت دیگر ریئل میڈرڈ کھلاڑیوں سے ملاقات کی دعوت دی گئی ہے۔5 سالہ احمد دوابشا کے دادا نے کہا کہ وہ اپنے عزیزوں کے ساتھ اردن کے دارالحکومت امان سے اسپین کا سفر کرے گا۔حسین دوابشا کے بموجب ان کو ریئل میڈرڈ کی جانب سے دعوت دی گئی ہے تاہم انھیں یہ معلوم نہیں کہ وہ ان کھلاڑیوں سے کب ملاقات کریں گے۔فلسطینی فٹ بال اسوسی ایشن کے سربراہ جبریل راجوب نے ریئل میڈرڈ کی جانب سے، ایک ایسے بچے کیلئے جو اپنا سارا خاندان کھو چکا ہے، انسانی ہمدردی کی اس اعلیٰ مثال کو قائم کرنے پر ان کا خیر مقدم کیا۔ انہوں نے کہا کہ اس سارے معاملے کے آغاز میں ایک نامعلوم سپاہی (سابق فٹبالر) زین الدین زیڈان بھی شامل ہیں جن کا وہ دل کی گہرائیوں سے شکریہ ادا کرتے ہیں۔احمد دوابشا کے دادا نے کہا کہ بچے نے 8 ماہ کا عرصہ ہسپتال میں گزارا، اب وہ بہتر ہورہا ہے، تاہم اس کی مکمل صحت یابی کی لئے مزید وقت اور احتیاط درکار ہے۔خیال رہے کہ گزشتہ سال اگست میں اسرائیل کے انتہا پسند یہودی آباد کاروں نے فلسطین کے مغربی کنارے میں گھروں پر حملہ کرکے انھیں آگ لگادی تھی جس کے نتیجے میں 18 ماہ کا فلسطینی بچہ علی سعادت دوابشا زندہ جل کر ہلاک ہوگیا تھا جبکہ اس کا بھائی احمد دوابشا، والد اور والدہ شدید زخمی ہوگئے تھے۔احمد دوابشا کے والد اور والدہ بعد ازاں زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دوران علاج جان بحق ہوگئے تھے، تاہم اس بد نصیب خاندان میں صرف احمد دوابشا 8 ماہ ہسپتال میں علاج معالجے کے بعد زندہ بچ جانے میں کامیاب ہوگیا۔

TOPPOPULARRECENT