Tuesday , August 14 2018
Home / Top Stories / سابقہ پی ڈی پی حکومت کے عوام کُش اقدامات سے کشمیریوں کو اپنا مستقبل تاریک نظر آرہاہے : شمیمہ فردوس

سابقہ پی ڈی پی حکومت کے عوام کُش اقدامات سے کشمیریوں کو اپنا مستقبل تاریک نظر آرہاہے : شمیمہ فردوس

بارہمولہ ، 18 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) نیشنل کانفرنس خواتین ونگ کی صدر شمیمہ فردوس نے الزام لگایا کہ سابق پی ڈی پی بی جے پی مخلوط حکومت کی غلط پالیسیوں اور عوام کُش اقدامات سے آج کشمیریوں کو اپنا مستقبل تاریک نظر آرہاہے ۔ انہوں نے کہا کہ گذشتہ 3سال میں عوام کے خلاف زور آزمائی کی پالیسی اختیار کرکے کشمیریوں کو پشت بہ دیوار کرنے میں کوئی کثر باقی نہیں رکھی گئی۔ شمیمہ فردوس نے ان باتوں کا اظہار بدھ کے روز یہاں ڈاک بنگلہ بارہمولہ میں یک روزہ خواتین کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقعے پر پارٹی کے ضلع صدر بارہمولہ و سابق وزیر جاوید احمد ڈار، ضلع سکریٹری غلام حسن راہی اور صدر صوبہ خواتین ونگ انجینئر صبیہ قادری، ضلع صدر بارہمولہ ایڈوکیٹ نیلوفر مسعود کے علاوہ کئی عہدیداران موجود تھے ۔ شمیمہ فردوس نے کہا کہ پی ڈی پی نے کرسی پر براجمان ہونے کے ساتھ ہی عوام کے خلاف جنگ چھیڑ دی۔ انہوں نے کہا ‘پی ڈی پی بھاجپا دور حکومت کے ساڑھے 3سال میں 237عام شہری موت کے گھاٹ اُتار دیئے گئے ، 30ہزار سے زائد لوگ زخمی ہوئے ، ساڑھے 3ہزار کی آنکھوں پر زخم لگے اور1025 افراد ایک یا دونوں آنکھوں کی بینائی سے محروم ہوئے ، جن میں خواتین کی اچھی خاصی تعداد بھی شامل ہے ‘۔ انہوں نے کہا کہ پی ڈی پی بھاجپا دور حکومت میں 31ہزار لوگوں کو گرفتار کیا گیا اور 1100زائد افراد پر پی ایس ایف کا اطلاق عمل میں لایا گیا جبکہ اس وقت بھی 3000کے قریب ریاست کے جیلوں میں مقید ہیں۔نیز پی ڈی پی حکومت نے نوجوانوں کی نسل کشی اور ان کا مستقبل تاریخ بنانے میں کوئی کثر باقی نہیں چھوڑی۔ شمیمہ فردوس نے کہا کہ پی ڈی پی دور حکومت میں نوجوانوں کے حقوق پر بھی شب خون مارا گیا۔ ان کا کہنا تھا ‘ چور دروازے سے بھرتیاں عمل میں لائی گئیں، رشتے داروں ، اقربا اور منظور نظر افراد کو بڑے بڑے عہدوں پر فائز کیا گیا۔ قابل، باصلاحیت اور مستحق اُمیدواروں کے حقوق سلب کئے گئے ۔ انہوں نے کہا کہ کھادی اینڈ ولیج بورڈ سے لیکر سپورٹس کونسل تک پی ڈی پی والوں نے نہ صرف لوٹ کھسوٹ مچائی بلکہ غیر قانونی طور بھرتیاں بھی عمل میں لائیں’۔
انہوں نے کہا کہ پی ڈی پی کے ان سکینڈلوں کی اعلیٰ سطحی تحقیقات کرکے کشمیری نوجوانوں کے ساتھ انصاف کیا جانا چاہئے ۔ صدر صوبہ خواتین ونگ صبیہ قادری نے اپنے خطاب میں کہا کہ پی ڈی پی اور اُن کے ساجھی داروں نے اقتدار سنبھالنے کے ساتھ ہی ریاست کو اندھیروں میں دھکیلنا شروع کردیا۔ پی ڈی پی اور بھاجپا کے ناپاک اتحاد کے ساتھ ہی ریاست کے لوگوں پر مصیبت کے پہاڑ ٹوٹ پڑے ۔ قلم دوات جماعت کی سربراہی والی حکومت نے اقتدار شروع سے ہی نوجوانوں مخالف پالیسی اختیار کی اور حکومت گرنے تک لگاتار یہاں کے نوجوانوں کو پشت بہ دیوار کرنے کا سلسلہ جاری رکھا گیا۔ گذشتہ ساڑھے 3سال میں یہاں کے لوگوں خصوصاً نوجوانوں پر جو مظالم ڈھائے گئے اُن کی مثال تاریخ میں کہیں نہیں ملتی۔ پی ڈی پی حکومت نے عوام پر مار دھاڑ، جبر و استبداد، خوف و ہراس، پکڑ دھکڑ اور توڑ پھوڑ کے ریکارڈ توڑ مظالم ڈھا کر یہاں دہشت زدہ ماحول قائم کیا۔

TOPPOPULARRECENT