Friday , September 21 2018
Home / Top Stories / سابق صدر عبدالکلام کے گھر سے کمل ہاسن کے سیاسی سفر کا آغاز

سابق صدر عبدالکلام کے گھر سے کمل ہاسن کے سیاسی سفر کا آغاز

ٹامل اسٹار کی پارٹی کا نام ’مکل نیدھی مییم ‘ ۔ ’’ذات پات ، مذہب کی سیاست نہیں کروں گا‘‘
رامنتاپورم ۔ 21 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) ٹاملناڈو کے مقبول عام اداکار کمل ہاسن نے سابق صدرجمہوریہ اے پی جے عبدالکلام مرحوم کے مقبرہ سے آج اپنے سیاسی سفر کا آغاز کیا اور اپنی پارٹی ’مکل نیدھی مییم‘ (ایم این ایم) کی تشکیل کا اعلان کیا ۔ کمل ہاسن نے کہا کہ وہ ذات پات اور مذہب کی چالیں نہیں چلیں گے اور اپنی پارٹی کی سیاست کو اس لعنت سے پاک رکھیں گے۔ قبل ازیں رامیشورم میں عبدالکلام کے آبائی گھر پہنچ کر ان کے افراد خاندان سے ملاقات بھی کی جہاں ان کا پرتپاک خیرمقدم کیا گیا لیکن کمل ہاسن کا یہ دورہ طئے شدہ منصوبہ کے مطابق نہیں ہوسکا کیونکہ مقامی انتظامیہ نے انہیں یہ کہتے ہوئے عبدالکلام اسکول کا دورہ کرنے کی اجازت نہیں دی کہ ان کا یہ دورہ سیاسی نوعیت کا ہے۔ عبدالکلام نے اس اسکول میں ابتدائی تعلیم حاصل کی تھی۔ رابطہ کرنے پر کمل ہاسن کی تشہیر کے ذمہ داروں نے کہا کہ حکام نے یہ کہتے ہوئے اجازت دینے سے انکار کردیا کہ (اس دورہ سے) طلبہ کو خلل ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ یہ اداکار کسی کیلئے خلل اندازی کرنا نہیں چاہتے تھے چنانچہ وہ اپنی ہوٹل واپس ہوگئے

جہاں ماہی گیروں کے اجلاس سے خطاب کیا۔ اس دوران اداکار و ہدایت کار کمل ہاسن نے عبدالکلام کی رہائش گاہ کے دورہ پر اپنے تاثرات بیان کرتے ہوئے کہا کہ ’’ عام اور معمولی شروعات سے عظیم بلندیوں تک رسائی حاصل کی جاسکتی ہے۔ درحقیقت یہ عظیم بلندی و کامیابی سادگی سے آتی ہے۔ اس سادگی کی حامل اس عظیم شخصیت کی عام نوعیت کی آرام گاہ سے اپنا سفر شروع کرتے ہوئے مجھے خوشی ہوئی ہے‘‘۔ کمل ہاسن نے عبدالکلام کے بڑے بھائی زائد از 90 سالہ محمد متومیراں لبھائی ماریکر سے ملاقات کی۔ ان کے افراد خاندان نے اس اداکار کو سابق صدر کی تصویر پر مشتمل مومنٹو پیش کیا۔ بعدازاں کمل ہاسن نے ماہی گیروں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ میڈیا کے ذریعہ انہیں مسائل کا پتہ چلا ہے لیکن وہ ماہی گیروں سے بذات خود ان کے مسائل کی سماعت کرنا چاہتے ہیں۔ بات چیت کے دوران اکثر وہ ’’اچھا ! اب سے ایسا ہی ہوگا‘‘ کہتے رہے۔ انہوں نے الزام عائد کیا کہ ماضی کی حکومتیں ماہی گیروں سے کئی وعدے کرچکی ہیں لیکن ان کی تکمیل نہیں کی گئی۔ کمل ہاسن آج شام مدورائی میں منعقد شدنی جلسہ عام میں اپنی پارٹی کے قیام کا اعلان کرتے ہوئے پارٹی پرچم لہرائیں گے۔ دہلی کے چیف منسٹر اور عام آدمی پارٹی کے سربراہ اروند کجریوال اور دیگر قائدین اس جلسہ عام میں شرکت کریں گے۔ اس سے پہلے انہوں نے رامنتاپورم اور دیگر مقامات پر بھی جلسوں سے خطاب کا اعلان کیا ہے۔ کمل ہاسن نے کہا : ’’عبدالکلام کے گھر یا اسکول کے دورہ میں کوئی سیاسی مفاد و محرکات نہیں تھے۔ کلام ایک معمولی اور عام گھر سے آئے تھے میرے لئے ایک انتہائی شخصیت ہیں۔ ایک رول ماڈل (قابل تقلید مثالی نمونہ) ہیں۔ میں وہاں گیا تھا۔ یہ ایک منصوبہ بند دورہ تھا‘‘۔
ان (عبدالکلام) کے گھر جانے میں کوئی سیاست ملوث نہیں تھی‘‘۔ کمل ہاسن نے عبدالکلام کی حب الوطنی، اولوالعزمی اور دیگر خصوصیات کی ستائش کرتے ہوئے کہا کہ وہ ان خوبیوں سے ہی کافی متاثر ہوئے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT