Wednesday , December 19 2018

سابق وزیراعظم پاکستان جیلانی کی اپنے اغوا شدہ بیٹے سے دو سال بعد بات چیت

لاہور۔24مئی ( سیاست ڈاٹ کام ) پاکستان کے سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی نے آج کہا کہ انہوں نے اپنے فرزند علی یوسف رضا گیلانی سے آج بات چیت کی ہے ۔ ان کا بیٹا علی حیدر اغوا ہونے کے بعد پہلی بار اپنے والد سے بات کرسکا ۔ اُسے طالبان نے 2013ء میں گرفتار کرلیا تھا اور اب وہ افغانستان میں زیر حراست ہے۔ ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے یوسف رضا

لاہور۔24مئی ( سیاست ڈاٹ کام ) پاکستان کے سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی نے آج کہا کہ انہوں نے اپنے فرزند علی یوسف رضا گیلانی سے آج بات چیت کی ہے ۔ ان کا بیٹا علی حیدر اغوا ہونے کے بعد پہلی بار اپنے والد سے بات کرسکا ۔ اُسے طالبان نے 2013ء میں گرفتار کرلیا تھا اور اب وہ افغانستان میں زیر حراست ہے۔ ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے یوسف رضا گیلانی نے کہا کہ آج انہیں ایک ٹیلیفون کال نامعلوم ٹیلی فون نمبر سے وصول ہوئی ۔ ان کے اغوا شدہ بیٹے حیدر نے اُن سے ٹیلی فون پر کہا کہ وہ خیریت سے ہے اور اس نے دیگر ارکان خاندان کی خیریت دریافت کی ۔ سابق وزیر اعظم پاکستان نے کہا کہ ہم نے 8منٹ تک بات چیت کی اور انہوں نے اپنے بیٹے کی بحفاظت واپسی کے بارے میں دریافت کیا ۔ علی حیدر کو بندوق برداروں نے ملتان کے علاقہ سے جو گیلانی کا آبائی وطن ہے‘11مئی 2013ء سے دو دن قبل اغوا کرلیا تھا جب کہ 11مئی کو پاکستان کے عام انتخابات مقرر تھے ۔ زرتاوان کا کوئی مطالبہ نہیں کیا گیا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT