سات نشستوں پر مجلس کا قبضہ برقرار ۔ شہر میں ٹی آر ایس کو بھی سات نشستیں

حیدرآباد 11 ڈسمبر(سیاست نیوز) شہرکے 15 حلقہ جات اسمبلی میں مجلس اپنے 7 حلقوں پر قبضہ برقرار رکھنے میں کامیاب ہوچکی ہے جبکہ تلنگانہ راشٹر سمیتی نے مابقی 7حلقہ جات اسمبلی پر کامیابی حاصل کرکے ریکارڈ قائم کیا ہے ۔ بی جے پی صرف گوشہ محل تک محدود ہوگئی ہے ۔ حلقہ اسمبلی چندرائن گٹہ کے مجلسی امیدوار مسٹر اکبر الدین اویسی نے 80 ہزار 264 ووٹوں کی بھاری اکثریت سے کامیابی حاصل کی‘ انہیں جملہ 95 ہزار 349 ووٹ حاصل ہوئے ۔حلقہ چارمینار سے مجلسی امیدوار مسٹر ممتاز احمد خان نے 32ہزار 586 ووٹوں کی اکثریت حاصل کی جنہیں 53ہزار 808 ووٹ حاصل ہوئے ۔ حلقہ بہادر پورہ سے معظم خان نے 96ہزار 993 ووٹ حاصل کرکے 82 ہزار 518 ووٹوں کی اکثریت سے کامیابی حاصل کی ۔حلقہ ملک پیٹ میں احمد بن عبداللہ بلعلہ نے 53 ہزار 281 ووٹ حاصل کئے اور 23 ہزار 512 ووٹوں کی اکثریت سے کامیابی حاصل کی۔ حلقہ کاروان سے مجلسی امیدور کوثر محی الدین نے 85 ہزار 401ووٹ حاصل کئے اور 49 ہزار 692 ووٹوں کی اکثریت حاصل کی ۔ حلقہ یاقوت پورہ سے جناب سید احمد پاشاہ قادری نے 69 ہزار 595 ووٹ حاصل کئے اور 46ہزار 978کی اکثریت سے کامیابی حاصل کی ۔ حلقہ اسمبلی نامپلی سے مجلسی امیدوار سید جعفر حسین معراج نے 57 ہزار 940 ووٹ حاصل کرکے 9 ہزار 675 ووٹوں کی اکثریت سے کامیابی حاصل کی ۔ حلقہ گوشہ محل سے بی جے پی امیدوار راجہ سنگھ نے 61 ہزار 854 ووٹ حاصل کرکے 17ہزار 734ووٹوں کی اکثریت سے کامیابی حاصل کی ۔ شہر کے دیگر 7 حلقہ جات اسمبلی جوبلی ہلز‘ مشیرآباد‘ عنبر پیٹ‘ سکندرآباد‘ سکندرآباد کنٹونمنٹ‘ صنعت نگر اور خیریت آباد سے تلنگانہ راشٹر سمیتی امیدواروں نے کامیابی حاصل کی ۔ خیریت آباد سے ٹی آر ایس امیدوار ڈی ناگیندر نے 63ہزار 68ووٹ حاصل کرکے کامیابی حاصل کی جبکہ حلقہ عنبرپیٹ سے ٹی آر ایس امیدوار کے ۔وینکٹیش نے بی جے پی کے کشن ریڈی کو شکست دیدی ۔ ماگنٹی گوپی ناتھ نے جوبلی ہلز سے دوبارہ کامیابی حاصل کی ۔مسٹر پدما راؤ نے حلقہ سکندرآباد سے کامیابی حاصل کی ۔ جی سائنا نے حلقہ کنٹونمنٹ سے دوبارہ کامیابی حاصل کی ۔ حلقہ صنعت نگر سے ٹی آر ایس امیدوار سرینواس یادو نے کامیابی حاصل کی ۔ اسی طرح حلقہ مشیر آباد سے تلنگانہ راشٹر سمیتی امیدوار مسٹر ایم گوپال نے بی جے پی ریاستی صدر ڈاکٹر لکشمن کو شکست دیدی ۔

TOPPOPULARRECENT