Wednesday , December 13 2017
Home / شہر کی خبریں / ساوتھ زون آر ٹی اے بنڈلہ گوڑہ بیت الخلاء سے محروم

ساوتھ زون آر ٹی اے بنڈلہ گوڑہ بیت الخلاء سے محروم

کھلے میں رفع حاجت ، سوچھ حیدرآباد و سوچھ تلنگانہ کا دعویٰ کھوکھلا ثابت
حیدرآباد۔22ستمبر (سیاست نیوز) مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد کی جانب سے شہر حیدرآباد کو سوچھ حیدرآباد اور کھلے میں رفع حاجت سے پاک قرار دینے میں کوئی کسرباقی نہیں رکھی جا رہی ہے بلکہ یہ دعوی کیا جا رہا ہے کہ شہر حیدرآباد ہی نہیں بلکہ جی ایچ ایم سی حدود کو کھلے مقام پر رفع حاجت سے پاک کردیا گیا ہے اور کسی بھی مقام پر عوام کو بیت الخلاء کی سہولت فراہم کرنے میں بلدیہ کی جانب سے کوتاہی نہیں کی جا رہی ہے ۔ حکومت ہند کی سوچھ بھارت اسکیم کے ساتھ ہی حکومت تلنگانہ کی جانب سے سوچھ تلنگانہ اور سوچھ حیدرآباد کا اعلان کرتے ہوئے صفائی کو ممکن بنانے کے اقدامات کئے جانے لگے اور گذشتہ چند ماہ کے دوران کھلے عام رفع حاجت کرنے والوں کے خلاف مہم چلاتے ہوئے مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد نے دعوی کردیا کہ جی ایچ ایم سی حدود کھلے عام رفع حاجت سے پاک ہو چکے ہیں لیکن مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد کے اس دعوی کی قلعی کھولنے کے لئے ساؤتھ زون روڈ ٹرانسپورٹ اتھاریٹی کے دفتر واقع بندلہ گوڑہ کا ایک دورہ کافی ہے جہاں سرکاری دفتر میں عوامی بیت الخلاء کی سہولت نہ ہونے کے سبب عوام کو دفتر کے ہی میدان میں پیشاب کرتے دیکھا جانا معمول کی بات بن چکی ہے۔ لائسنس یا دیگر امور کی انجام دہی کے لئے ساؤتھ زون بندلہ گوڑہ آر ٹی اے دفتر پہنچنے والوں کے لئے دفتر میں نہ بیت الخلاء کی سہولت موجود ہے اور نہ ہی انہیں بیٹھنے اور انتظار کرنے کی کوئی سہولت فراہم کی گئی ہے۔ آر ٹی اے دفتر کے کھلے میدان میں رفع حاجت کرنے والوں نے بتایا کہ جب انہیں دفتری کام کیلئے 2تا3گھنٹے دفتر میں موجود رہنا پڑتا ہے اور اپنی باری کا انتظار کرنا ہوتا ہے تو وہ کیا کریں جبکہ دفتر میں کوئی سہولت نہیں ہے۔ عہدیداروں نے بتایا کہ پرانے شہر کے اس دفتر سے روزانہ ہزاروں افراد بشمول خواتین رجوع ہوتے ہیں لیکن ان کیلئے بھی کوئی سہولت نہیں ہے ۔ مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد کے عہدیداروں کا کہنا ہے کہ آر ٹی اے کے دفتر میں سہولت کی فراہمی ان کی ذمہ داری نہیں ہے لیکن آر ٹی اے عہدیداروں نے بتایا کہ اس دفتر کی عمارت کی تکمیل میں پیدا ہونے والے مسائل سے سب واقف ہیں اسی لئے یہ ذمہ داری جی ایچ ایم سی کو تفویض کی گئی تھی اور اس بات پر بھی رضا مندی ظاہر کی گئی تھی کہ مجلس بلدیہ عظیم ترحیدرآباد کی جانب سے آر ٹی دفتر کے حدود میں عوامی بیت الخلاء کی تعمیر کی صورت میں اندرون احاطہ جگہ کی فراہمی کو بھی یقینی بنایا جائے گا۔ جی ایچ ایم سی عہدیدار ہوٹلوں میں صفائی‘ سڑکوں پر صفائی کے علاوہ شہر کے ان مقامات پر صفائی کے لئے خصوصی مہم چلا رہے ہیں جن مقامات پر عوامی چہل پہل زیادہ ہوتی ہو لیکن پرانے شہر میں موجود بندلہ گوڑہ آر ٹی اے دفتر کی جانب سے بلدیہ کے کوئی عہدیداروں کی توجہ مرکوز نہیں ہو رہی ہے جبکہ یہ ایک سرکاری دفتر ہے اور اس دفتر سے روزانہ ہزاروں کی تعداد میں لوگ رجوع ہوتے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT