Sunday , January 21 2018
Home / ہندوستان / سبسیڈیز کو معقولیت پسند بنانے کیلئے مزید اقدامات زیرغور

سبسیڈیز کو معقولیت پسند بنانے کیلئے مزید اقدامات زیرغور

اقتصادی خسارہ کا بوجھ پر گھٹانا مقصد :آج وزیراعظم کی چیف منسٹروں کیساتھ میٹنگ اہم :ارون جیٹلی

اقتصادی خسارہ کا بوجھ پر گھٹانا مقصد :آج وزیراعظم کی چیف منسٹروں کیساتھ میٹنگ اہم :ارون جیٹلی
نئی دہلی ، 6 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) انڈیا اِنکارپوریشن کو معاشی اصلاحات آگے بڑھانے این ڈی اے عہد کی یقین دہانی کراتے ہوئے وزیر فینانس ارون جیٹلی نے کہا کہ حکومت سبسیڈیز کو معقولیت پسند بنانے مزید اقدامات کرے گی۔ ’’میں نے مصارف انصرام کمیشن کے ساتھ سلسلہ وار اجلاس منعقد کئے ہیں۔ وہ رعایتوں کو واجبی کے تعلق سے بعض نہایت مفید تجاویز پر کام کررہے ہیں۔ آئندہ چند ماہ میں … اور شاید اس سے قبل بھی ہوسکتا ہے کہ وہ ہم کو بعض عبوری سفارشات پیش کرنے میں کامیاب ہوں گے تاکہ ہم اس سمت میں معقولیت پسندی کا کام آگے بڑھا سکتے ہیں،‘‘ جیٹلی نے یہ بات کہی۔ حکومت کے یہ فیصلہ کی یاددہانی کراتے ہوئے کہ ڈیزل کی قیمتوں کو مارکیٹ کی قیمت سے مربوط کیا جائے گا، وزیر موصوف نے انڈیا اکنامک کانکلیوو کو بتایا کہ یہ حکومت کے سبسیڈی بوجھ کو گھٹانے میں مدد کرے گا۔ علاوہ ازیں حکومت نے حال میں فیصلہ کیا کہ منتخب شہروں میں ایل پی جی صارفین کو تجرباتی اساس پر راست نقد رعایت دی جائے۔ مرکز نے ایک کمیشن سابق آر بی آئی گورنر بمل جالان کی قیادت میں تشکیل دیا تھا کہ سبسیڈی کو منطقی بنانے کیلئے اقدامات تجویز کرے اور حکومت کو اقتصادی خسارہ مؤثر طور پر گھٹانے میں مدد کرے۔

حکومت موجودہ طور پر مختلف اقسام کی رعایتیں فراہم کررہی ہے جو کئی لاکھ کروڑ روپئے کی ہوجاتی ہیں۔ یہ مالی سال 2014-15ء کیلئے 2.51 لاکھ کروڑ روپئے ہونے کا تخمینہ ہے۔ ٹیلی ویژن چیانل ’ای ٹی ناؤ‘ کے زیراہتمام منعقدہ کانکلیوو سے خطاب کرتے ہوئے جیٹلی نے اعتماد ظاہر کیا کہ حکومت انشورنس اور جی ایس ٹی بلوں کو پارلیمنٹ کے موجودہ سیشن میں پیش کردینے میں کامیاب ہوجائے گی۔ حکومت کو چونکہ راجیہ سبھا میں اکثریت حاصل نہیں، اس لئے ان بلوں کو آگے بڑھانے پارلیمنٹ کے مشترکہ سیشن کے بارے میں حکومت کے موقف پر انھوں نے کہا: ’’ہم قانون سازیوں کیلئے جوائنٹ سیشن کے آخری حربہ کو بروئے کار لانے کے خواہش مند نہیں ہیں۔ لیکن اگر یہ ناگزیر ہوجائے تو پھر یہ دستوری حل ہوتا ہے۔‘‘ وزیراعظم نریندر مودی کی کل چیف منسٹروں کے ساتھ میٹنگ کے بارے میں جس میں 64 سال پرانے منصوبہ بندی کمیشن کو ہٹانے پر غوروخوض ہوگا، جیٹلی نے کہا کہ ریاستوں کو بااختیار بنانا ہمارے اہم ایقان میں شامل رہا ہے۔ ’’مجھے امید ہے کہ کل کی میٹنگ کے بعد جو کچھ بھی فیصلہ کیا جائے گا، شاید ریاستوں کو بہتر موقف حاصل ہوجائے گا‘‘۔

TOPPOPULARRECENT