Thursday , September 20 2018
Home / اضلاع کی خبریں / سبسیڈی پر قرض کیلئے انٹرویو، اقلیتی نوجوانوں کو مایوسی

سبسیڈی پر قرض کیلئے انٹرویو، اقلیتی نوجوانوں کو مایوسی

شاد نگر ۔ 21 ۔ ا پریل (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) میناریٹی فینانس کارپوریشن سبسیڈی لون کیلئے بلدیہ آفس میں داخل کی گئی درخواستوں کیلئے شاد نگر بلدیہ آفس کونسل ہال میں انٹرویوز کا انعقاد عمل میں لایا گیا ۔ درخواست گزاروں کو اس وقت مایوسی کا سامنا کرنا پڑا، جب بینک کے عہدیدار بعض درخواست گزاروں کا انٹرویو لئے بغیر بلدیہ آفس سے روانہ ہوگئے ۔ اے

شاد نگر ۔ 21 ۔ ا پریل (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) میناریٹی فینانس کارپوریشن سبسیڈی لون کیلئے بلدیہ آفس میں داخل کی گئی درخواستوں کیلئے شاد نگر بلدیہ آفس کونسل ہال میں انٹرویوز کا انعقاد عمل میں لایا گیا ۔ درخواست گزاروں کو اس وقت مایوسی کا سامنا کرنا پڑا، جب بینک کے عہدیدار بعض درخواست گزاروں کا انٹرویو لئے بغیر بلدیہ آفس سے روانہ ہوگئے ۔ اے پی جی وی پی بینک شاد نگر برانچ کے عہدیدار انٹرویو لینے کیلئے شاد نگر بلدیہ آفس نہیں پہونچے جس کی وجہ سے بعض درخواست گزاروں نے شدید برہمی کا اظہار کیا ۔ شاد نگر بلدیہ کے حدود میں درخواست داخل کرنے والوں کی تعداد سینکڑوں میں ہے۔ بلدیہ کمشنر شاد نگر راما انجنیلو نے بینک لیول کوٹہ کے متعلق تفصیل سے واقف کرواتے ہوئے بتایا کہ ایس بی ایچ کو(7) کاکوٹہ، ایس بی آئی کو (7) کا کوٹہ، آندھرا بینک (6) کا کوٹہ ، اے پی جی وی پی بینک کو (6) کا کوٹہ ، بینک آف بڑودہ کو 4 کا کوٹہ مختص ہے۔ شاد نگر بلدیہ کے حدود میں صرف 5 بینکوں کی نشاندہی کی گئی ہے۔ 5 بینکوں میں جملہ 30 درخواست گزاروں کو لون فراہم کرنے کا موقع فراہم کیا گیا ہے جبکہ درخواستیں سینکڑوں کی تعداد میں شاد نگر بلدیہ دفتر کو موصول ہوئے ہیں۔ ہمہ اقسام کے کاروبار کرنے والے معزز حضرات بالخصوص نوجوانوں نے کئی ایک امیدوں کے ساتھ روپئے خرچ کرتے ہوئے کاغذی کارروائی کو مکمل کر تے ہوئے بلدیہ آفس میں داخل کئے ۔ فی درخواست گزار کو کم از کم کاغذات تیار کرنے کے دوران ایک دفتر سے دوسرے دفتر کے چکر کاٹنا پڑا۔ صبح سے ہی بلدیہ آفس شاد نگر کے پاس درخواست گزاروں کا ہجوم دیکھا گیا۔

درخواست گز اروں میں شدید بے چینی پائی جارہی ہے ۔ بعض درخواست گزاروں کو انٹرویو کے بغیر ہی مایوس لوٹنا پڑا۔ چلچلاتی دھوپ کے باوجود درخواست گزار بڑی تعداد میں شاد نگر بلدیہ آفس پہونچے۔ درخواست گزاروں میں چھوٹے چھوٹے کاروبار کرنے والی خواتین بھی تھیں۔ درخواست گز اروں کی لسٹ شاد نگر بلدیہ دفتر کے نوٹس بورڈ پر چسپاں نہ کئے جانے پر درخواست گزار کو شدید دشواریوں کا سامنا کرنا پڑا۔ انٹرویو کیلئے آنے والے درخواست گزاروں کو کسی بھی طرح کی بلدیہ کی جانب سے سہولت فراہم نہیں کی گئی ۔ پینے کا پانی تک فراہم نہیں کیا گیا۔ شاد نگر بلدیہ دفتر میں فی الحال سینکڑوں کی تعداد میں درخواستیں موصول ہوچکی ہیں اور درخواست داخل کرنے کی تاریخ میں مزید توسیع کی گئی ہے اور بھی درخواستیں موصول ہونے کی امید ہے جبکہ لون کوٹہ فراہم کرنے کیلئے 5 بینکوں میں جملہ 30 ہی ہے۔ درخواست گزاروں نے تلنگانہ حکومت اور میناریٹی فینانس عہدیداروں سے مطالبہ کیا کہ کوٹہ میں مزید اضافہ کرتے ہوئے درخواست گزاروں کو کاروبار کرنے کا موقع فراہم کریں۔

TOPPOPULARRECENT