Tuesday , October 16 2018
Home / کھیل کی خبریں / سرفراز کی قیادت پر سوالیہ نشان

سرفراز کی قیادت پر سوالیہ نشان

دبئی۔12 مارچ (سیاست ڈاٹ کام )کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کے کپتان سرفراز احمد نے کہاہے کہ پاکستانی کرکٹ ٹیم کی قیادت سے متعلق پی سی بی کا جو فیصلہ ہوگا وہ منظور ہوگا۔ پاکستان سوپر لیگ کے 23 ویں میچ میں پشاور زلمی کو شکست دینے کے بعد میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے سرفراز احمد نے کہا کہ اپنے کیرئیر میں کبھی بھی کپتان بننے کا مطالبہ نہیں کیا۔مستقبل میں ٹیم کی قیادت کے حوالے سے جو فیصلہ پی سی بی کا ہوگا وہی انہیں منظور ہے۔سرفراز احمد نے کہا کہ میری ذمہ داری اچھی کرکٹ کھیلنا ہے اور بطور کپتان کارکردگی بہتر ہے تو امید ہے کہ میں ہی کپتان رہوں گا۔سرفراز احمد نے فاسٹ بولر راحت علی کے ایونٹ میں مظاہروں کو سراہا اور کہا کہ ٹورنمنٹ میں اب تک کی کامیابی میں ان کا اہم کردار ہے۔انہوں نے امید ظاہر کی کہ کیون پیٹرسن پاکستان آکر فائنل کھیلیں گے اور اس حوالے سے وہ اچھا فیصلہ کریں گے۔گزشتہ برس پی ایس ایل 2 کے فائنل میں 4 بیرونی کھلاڑی پاکستان نہیں آئے جس کی وجہ سے ٹیم متاثر ہوئی تاہم اس مرتبہ متبادل انتظام بھی کیا گیا ہے۔سرفراز احمد نے اعتراف کیا کہ انہوں نے کبھی نہیں سوچا تھا کہ لاہور قلندرز کی ٹیم ایونٹ میں پہلے مرحلہ کے دوران ہی باہر ہوجائے گی۔واضح رہے ٹیم کے ہیڈ کوچ مکی آرتھر نے کہا کہ جب تک میں کوچ ہوں ٹیم کی قیادت سرفراز احمد ہی کرینگے۔

TOPPOPULARRECENT