Friday , November 24 2017
Home / Top Stories / سرمایہ کاروں کیلئے شفاف اور قابل قیاس ٹیکس نظام کا وعدہ

سرمایہ کاروں کیلئے شفاف اور قابل قیاس ٹیکس نظام کا وعدہ

مختلف شعبوں میں سرمایہ کاری کی دعوت، وزیر فینانس ارون جیٹلی کا خطاب
نئی دہلی ۔ 14 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) وزیرفینانس ارون جیٹلی نے عالمی سرمایہ کاروں کو انتہائی شفاف اور قابل قیاس ٹیکس نظام کا تیقن دیا۔ انہوں نے مختلف شعبوں بشمول انفراسٹرکچر، مینوفیکچرنگ اور ڈیفنس میں سرمایہ کاری کی دعوت دی۔ انہوں نے اس یقین کا اظہار کیا کہ ہند ۔ امریکہ باہمی تجارت میں آئندہ 5 سال کے دوران 5 گنا اضافہ ہوگا اور یہ 500 بلین ڈالرس تک پہنچ جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ دونوں ممالک کے مابین بڑھتے باہمی تعاون کی وجہ سے ایسا ممکن ہے۔ ارون جیٹلی آج ہند ۔ امریکہ معاشی چوٹی اجلاس سے خطاب کررہے تھے۔ وزیراعظم نریندر مودی کے جاریہ ماہ کے اواخر میں دوسرے دورہ امریکہ سے قبل اس چوٹی اجلاس کا انعقاد عمل میں لایا گیا۔ امریکی سفیر متعینہ ہند رچرڈ ورما بھی اس موقع پر موجود تھے۔ ارون جیٹلی نے کہا کہ عالمی معاشی غیریقینی کیفیت کے باوجود ہندوستان کی معاشی بنیادیں کافی مضبوط ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت حقیقی معیشت کو مستحکم کرنے پر توجہ مرکوز کئے ہوئے ہے اور اس مقصد کیلئے جلد فیصلہ سازی، مستحکم پالیسی فیصلے، قابل قیاس ٹیکس نظام اور جاریہ بزنس میں آسانیاں فراہم کرنے کیلئے اقدامات کئے جارہے ہیں۔ ٹیکس نظام کی صراحت کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ حکومت نے سرکاری فیصلوں، قانون سازی یا پھرقابل قبول عدالتی فیصلوں کے ذریعہ اس مسئلہ کو حل کرنے کی کوشش کی ہے۔ حکومت نے ہمیشہ یہ کوشش کی کہ ٹیکس نظام کے مسائل سے بچا جائے اور ان پیچیدگیوں کو آنے والی حکومتوں کے  حوالے کردیا جائے۔ اس کی وجہ سے ہندوستان کا امیج کافی متاثر ہوا ہے لیکن ہم ایک شفاف اور قابل قیاس ٹیکس نظام ہندوستان میں پیش کرسکتے ہیں۔ انہوں نے اس یقین کا اظہار کیا کہ اس ضمن میں پہل کرنے سے ہندوستان عالمی سرمایہ کاروں کو مزید راغب کرے گا۔ انہوں نے کہا کہ اس نظام کی وجہ سے ہندوستان کی شرح ترقی کا بھی مؤثر طور پر تعین کیا جاسکے گا اور ہندوستان نے غربت کو ختم کرنے میں بھی مدد ملے گی۔ ہند۔ امریکہ باہمی روابط میں اضافہ کا حوالہ دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہماری توقعات بہت زیادہ ہیں۔ ہم نے یہ نشانہ مقرر کر رکھا ہے کہ آئندہ چند سال میں باہمی تجارت میں 5 گنا اضافہ ہو اور یہ موجودہ 100 بلین ڈالرس سے بڑھ کر 500 بلین ڈالرس ہوجائے۔ رچرڈ ورما نے اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وزیراعظم نریندر مودی کے موجوزہ دورہ کے بارے میں کیلیفورنیا میں کافی جوش و خروش پایا جاتا ہے۔ وہ ہندوستان کے دوسرے وزیراعظم ہیں جو کیلیفورنیا کا دورہ کرنے والے ہیں۔ اس سے پہلے جواہر لال نہرو نے یہاں کا دورہ کیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ مودی کے اس دورہ سے ہندوستان اور امریکہ کے باہمی روابط ایک نئی حد تک پہنچ جائیں گے۔

TOPPOPULARRECENT