Thursday , July 19 2018
Home / شہر کی خبریں / سرکاری ملازمین کے دیرینہ مسائل کی یکسوئی کا مطالبہ ورنہ احتجاج کی دھمکی

سرکاری ملازمین کے دیرینہ مسائل کی یکسوئی کا مطالبہ ورنہ احتجاج کی دھمکی

جے اے سی وفد کی چیف سکریٹری سے ملاقات،18مطالبات کی پیشکشی
حیدرآباد۔/11 اپریل، ( سیاست نیوز) ریاست تلنگانہ کے سرکاری ملازمین کی مشترکہ مجلس عمل ( جوائنٹ ایکشن کمیٹی ) نے حکومت تلنگانہ سے اپنے بعض دیرینہ حل طلب مسائل کی عاجلانہ یکسوئی کرنے کا پرزور مطالبہ کیا۔ بصورت دیگر آئندہ کے احتجاجی لائحہ عمل کو قطعیت دینے کا انتباہ دیا۔ اس سلسلہ میں آج صدرنشین تلنگانہ گورنمنٹ ایمپلائز جوائنٹ ایکشن کمیٹی کے رویندر ریڈی کی قیادت میں ایک وفد نے ریاستی چیف سکریٹری تلنگانہ ایس کے جوشی سے ملاقات کرکے سرکاری ملازمین کے دیرینہ حل طلب 18 مطالبات پر مشتمل ایک یادداشت پیش کی۔ وفد میں سکریٹری جنرل جے اے سی وی ممتا، اے ستیہ نارائنا، راجندر، مہی پال ریڈی، مجیب الدین، مدھوسدن ریڈی، راج کمار گپتا، گیانیشور اور دیگر شامل تھے ۔ چیف سکریٹری نے انہیں پیش کردہ یادداشت پر اپنے مثبت رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے تبادلوں، ترقیوں، آرڈر ٹو سرو، و دیگر مسائل پر طریقہ کار کو قطعیت دینے کیلئے تجاویز اور مشورے دینے کی خواہش کی۔ جس پر جب کا تب ہی ملازمین کی مشترکہ مجلس عمل نے مناسب تجاویز و مشورے فراہم کئے۔ وی ممتا سکرٹری جنرل ایمپلائز جوائنٹ ایکشن کمیٹی نے بتایا کہ چیف سکریٹری کے پیش کردہ 18 مطالبات کے منجملہ چھ اہم مطالبات کی فی الفور یکسوئی کرنے کے اقدامات کرنے کا مطالبہ کیا گیا جن میں کانٹری بیوشن پنشن اسکیم ( سی پی ایس ) کو منسوخ کرنے کے معاملہ میں حکومت تلنگانہ سی بی ایس سے علحدگی اختیار کرکے مرکزی حکومت کو مکتوب روانہ کرکے اولڈ پنشن اسکیم کو متعارف کرنے ملازمین کے تبادلوں سے متعلق گزشتہ 8سال سے تبادلے نہ ہونے سے ملازمین کی کثیر تعداد میں پائے جانے کی روشنی میں ماہ اپریل کے اختتام تک رہنمایانہ خطوط جاری کرکے تبادلوں کے عمل کیلئے اقدامات کرنے کسی بھی مسائل سے گریز کرنے کیلئے سابق متحدہ اضلاع کی بنیاد پر ہی تبادلے کرنے اور پانچ سال مکمل کرنے والے ہر ملازمین کا تبادلہ کرنے، 11 ویں پے ریویژن کمیشن کو فوری طور پر تشکیل دینے اور مقررہ مدت میں رپورٹ طلب کرتے ہوئے یکم جولائی 2018ء سے پی آر سی پر عمل آوری کرنے، آندھرا پردیش میں خدمات انجام دینے والے تلنگانہ کے ملازمین درجہ چہارم کو جاریہ ماہ کے آخر تک تلنگانہ کو واپس طلب کرنے، اساتذہ کیلئے یونائٹیڈ سرویس رولز سے متعلق عدالت کے حکم التواء کو کالعدم کرواکر عمل آوری کرنے کا مطالبہ شامل ہے۔

TOPPOPULARRECENT