Wednesday , October 17 2018
Home / شہر کی خبریں / سرکاری ملازم کی خودکشی ، ویڈیو منظر عام پر سینئر عہدیداروں کی ہراسانی اور رشوت ستانی

سرکاری ملازم کی خودکشی ، ویڈیو منظر عام پر سینئر عہدیداروں کی ہراسانی اور رشوت ستانی

امراوتی ۔ 23 نومبر (پی ٹی آئی) آندھرا پردیش کے ضلع گنٹور میں میڈیکل اینڈ ہیلتھ ڈپارٹمنٹ سینئر اسسٹنٹ نے کئی سال سے ترقی نہ ملنے اور سینئر عہدیداروں کی ہراسانی کے باعث مبینہ طور پر خودکشی کرلی۔ این روی کمار نے خودکشی کرتے ہوئے اس کی ویڈیو گرافی کی اور فیس بُک پر آج خودکشی کی تمام وجوہات منظر عام پر آئیں۔ ضلع کلکٹر کے ششی دھر نے واقعہ کی تحقیقات کا حکم دیا ہے جبکہ متوفی کی اہلیہ پشپا لتا اور دلت تنظیموں نے روی کمار کی خودکشی کی وجہ بننے والے عہدیداروں کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کیا۔ ویڈیو میں روی کمار نے کہا کہ اعلیٰ عہدیدار اسے مسلسل ہراساں کررہے ہیں اور کئی سال سے ترقی بھی نہیں دی گئی ہے۔ ترقی کے لئے ایک لاکھ روپئے رشوت طلب کی گئی اور جب میں نے بہ مشکل 70,000 روپئے کی رقم جمع کی تو مجھے ترقی سے محروم رکھا گیا۔ جن افراد نے مجھ سے یہ رقم لی ، وہ ہمیشہ میرے مذاق اُڑاتے رہے اور ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ اگر میں مر بھی جاؤں تو ان کا کچھ بھی نہیں بگاڑ سکتا۔ اس بے عزتی کو برداشت نہ کرتے ہوئے آخرکار میں نے اپنی زندگی ختم کرنے کا فیصلہ کیا۔

TOPPOPULARRECENT