Monday , November 20 2017
Home / ہندوستان / سرینگر میں اب کوئی پابندی نہیں، ریل خدمات بحال

سرینگر میں اب کوئی پابندی نہیں، ریل خدمات بحال

جمعہ کو نافذ کردہ تحدیدات صورتحال میں بہتری کے پیش نظر برخاست، حکام کی وضاحت

سری نگر 16ستمبر (سیاست ڈاٹ کام ) گرمائی دارالحکومت سرینگر کے پائین شہر کے بیشتر حصوں میں جمعہ کے روز عائد کردہ پابندیاں ہٹالی گئیں ۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ پائین شہر کے کسی بھی علاقہ میں اب کوئی پابندیاں نافذ نہیںہیں۔ انہوں نے بتایا کہ پائین شہر کے پانچ پولیس تھانوں نوہٹہ، ایم آر گنج، رعناواری، خانیار اور صفا کدل کے تحت آنے والے علاقوں میں جمعہ کے روز احتیاطی اقدامات کے طور پر دفعہ 144 سی آر پی سی کے تحت پابندیاں نافذ کی گئی تھیں۔انہوں نے بتایا کہ ضلع مجسٹریٹ سری نگر کے احکامات پر ان پابندیوں کا اطلاق کسی بھی ناخوشگوار واقعہ کو ٹالنے کے لئے عمل میں لایا گیاتھا۔ یہ پابندیاں لشکر طیبہ کے کشمیر چیف ابو اسماعیل اور اس کے ساتھی چھوٹا قاسم کی ہلاکت کے خلاف احتجاجی مظاہروں یا کسی ناخوشگوار واقعہ کو روکنے کے لئے نافذ کئی گئی تھیں۔ دریںاثناء سرینگر کے مضافاتی علاقہ میں تصادم کے دوران لشکر طیبہ کے سربراہ ابو اسماعیل اور اس کے ساتھی ابو قاسم کے مارے جانے کے بعد وادی کشمیر میں سیکورٹی وجوہات سے ایک دن کے لئے ملتوی کی گئیں ریلوے خدمات کو آج بحال کردیا گیا۔ریلوے کے ایک سینئر افسر نے کہاکہ ہم نے تمام ٹرینوں کی آمدورفت بحال کردی ہے ۔ وسطی کشمیر میں سری نگر۔بڈگام سے شمالی کشمیر کے بارہمولہ کے درمیان ٹرین خدمات پھر سے شروع ہوگئی ہیں۔ جنوبی کشمیر میں سرینگر۔اننت ناگ۔ قاضی کنڈ سے جموں علاقہ کے بنیہال کے درمیان بھی ٹرینوں کی آمدورفت بحال کردی گئی ہے ۔پابندیوں کی وجہ سے پائین شہر کے نوہٹہ میں واقع تاریخی و مرکزی جامع مسجد میں مسلسل دوسرے جمعہ کی نماز ادا نہیں کی جاسکی۔
اے پی کے 5 سیاح ٹاملناڈو میں ہلاک
ترینلویلی 16 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) ایک تیز رفتار لاری نے سڑک پر ٹھہری بس کو پیچھے سے ٹکر دے دی جس کے نتیجہ میں آندھراپردیش کے 5 مسافرین ہلاک ہوگئے جو بس سے نیچے اُتر کر کھڑے تھے۔ پولیس نے آج یہاں کہاکہ یہ لوگ سیاحت پر اے پی کے ضلع گنٹور سے کنیاری کماری جارہے تھے۔

TOPPOPULARRECENT