Tuesday , August 21 2018
Home / سیاسیات / سری سری روی شنکر بی جے پی کا مہرہ : ایس پی

سری سری روی شنکر بی جے پی کا مہرہ : ایس پی

بلیا ۔ 18 ۔ نومبر : ( سیاست ڈاٹ کام ) : سماج وادی پارٹی کے ایک سینئیر لیڈر نے آج کہا کہ آرٹ آف لیونگ کے بانی سری سری روی شنکر کو جو بابری مسجد ۔ رام مندر تنازعہ کا دوستانہ حل تلاش کرنے کیلئے کام کررہے ہیں انہیں بی جے پی کی طرف سے محض ہندو ووٹ بینک کی صف بندی کیلئے مہرہ کے طور پر استعمال کیا جارہا ہے ۔ سپریم کورٹ نے ایودھیا کی بابری مسجد ۔ رام مندر تنازعہ پر 5 دسمبر سے سماعت شروع کرنے کا اعلان کیا ہے ۔ اس دوران روی شنکر نے اس مسئلہ کی یکسوئی کے لیے ثالثی کا رول ادا کرنے کی پیشکش کی ہے ۔ سماج وادی پارٹی کے قومی جنرل سکریٹری رام شنکر ودیارتھی نے کہا کہ ’ روی شنکر ، بی جے پی کے مہرہ ہیں ۔ بی جے پی کو اب پتہ چل گیا ہے کہ ترقی کے نام پر اس کی لفاظی اور قلا بازیوں کو عوام اچھی طرح محسوس کرچکے ہیں ۔ چنانچہ ہندو ووٹ بینک کی صف بندی کیلئے ہندو روحانی پیشوا کو محاذ پر ڈھکیلتے ہوئے رام مندر کا مسئلہ اٹھانے نے کی کوشش کی جارہی ہے ۔ ودیا رتھی نے کہا کہ ’ مرکز اور ریاست میں اب بی جے پی کی ہی حکومتیں ہیں ۔ چنانچہ ایودھیا میں رام مندر بنانے سے اب انہیں کس نے روکا ہے ؟ روی شنکر کی اس مساعی کو ہندو اورمسلمانوں کی بڑی تنظیموں سے کوئی تائید حاصل نہ ہوسکی ۔ مسلم پرسنل لا بورڈ اور وشوا ہندو پریشد نے ان کی کوششوں کی کامیابی کے بارے میں شکوک و شبہات کا اظہار کیا ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT