Thursday , January 18 2018
Home / شہر کی خبریں / سری سلم پانی مسئلہ پر مداخلت اور رائلسیما سے انصاف کا مطالبہ

سری سلم پانی مسئلہ پر مداخلت اور رائلسیما سے انصاف کا مطالبہ

رکن اسمبلی وائی ایس آر کانگریس سریکانت ریڈی کی پریس کانفرنس

رکن اسمبلی وائی ایس آر کانگریس سریکانت ریڈی کی پریس کانفرنس
حیدرآباد /24 اکتوبر (سیاست نیوز) قائد اپوزیشن آندھرا پردیش اسمبلی جگن موہن ریڈی نے وزیر اعظم نریندر مودی کو مکتوب روانہ کرتے ہوئے سری سلم پانی کے مسئلہ پر مداخلت کرنے اور علاقہ رائلسیما کے ساتھ انصاف کا مطالبہ کیا۔ آج یہاں ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وائی ایس آر کانگریس رکن اسمبلی سریکانت ریڈی نے بتایا کہ علاقہ رائلسیما پانی کی قلت کا شکار ہے، یہاں تک کہ عوام کو پینے کا پانی ملنا بھی محال ہے۔ انھوں نے کہاکہ چندرا بابو نائیڈو عوامی مفادات کو نظرانداز کرتے ہوئے اپنے ذاتی، سیاسی اور ریئل اسٹیٹ کاروبار کو ترجیح دے رہے ہیں اور سارا وقت سستی شہرت حاصل کرنے میں صرف کر رہے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ چیف منسٹر تلنگانہ اور چیف منسٹر آندھرا پردیش کا طرز عمل تکلیف دہ ہے، لہذا وزیر اعظم کو فوری مداخلت کرتے ہوئے دونوں چیف منسٹرس سے بات چیت کرکے مسئلہ حل کرنا چاہئے۔ انھوں نے چندرا بابو نائیڈو اور کے چندر شیکھر راؤ کو انانیت چھوڑنے اور رائلسیما کے مفادات کے بارے میں غور کرنے کا مشورہ دیا۔ مسٹر سریکانت نے چندرا بابو نائیڈو کی جانب سے رائلسیما کو نظرانداز کرنے پر وہاں کے تلگودیشم قائدین کی خاموشی کو معنی خیز قرار دیا۔ انھوں نے کہا کہ سری سلم سے پانی کی اجرائی کے مسئلہ پر دونوں حکومتوں کے درمیان سرد جنگ چل رہی ہے، جس کا خمیازہ رائلسیما کے عوام کو بھگتنا پڑ رہا ہے۔ انھوں نے رائلسیما کو پینے کا پانی فراہم کرنے کے لئے سری سلم میں برقی پیداوار کو فوری روک دینے تلنگانہ حکومت سے مطالبہ کیا۔

TOPPOPULARRECENT