Friday , October 19 2018
Home / دنیا / سری لنکا کیلئے آئی ایم ایف کا خطیر رقمی قرض

سری لنکا کیلئے آئی ایم ایف کا خطیر رقمی قرض

واشنگٹن ۔ 8 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) دی انٹرنیشنل مانیٹری فنڈ نے آج سری لنکا کے لئے 251 ملین امریکی ڈالرس جاری کئے جانے کو منظوری دی ہے جو دراصل تین سالہ قرضہ جات کی تازہ ترین ادائیگی ہے جو سری لنکا میں اصلاحات کی رفتار میں نمایاں کمی کے بعد تاخیر کا شکار ہوگئی تھی۔ آئی ایم ایف نے جون 2016ء میں 1.5 بلین ڈالرس قرض کو منظوری دی تھی جو دراصل سری لنکا میں مالیاتی بحران کے بعد منظور کیا گیا تھا اور آج کی خطیر رقمی ادائیگی کی منظوری کے بعد مجموعی طور پر 760 ملین ڈالرس کی ادائیگی عمل میں آ چکی ہے۔ آئی ایم ایف نے اس موقع پر ایک اہم بات یہ کہی کہ سری لنکا کو کم سے کم خسارہ ہمارا مقصد ہے تاہم اس کیلئے سری لنکا میں مزید ترقیاتی کام انجام دیئے جانے چاہئے بشمول ٹیکس کلکشن اور بیرونی سرمایہ کاری میں اضافہ۔ ڈپٹی منیجنگ ڈائرکٹر متسوہیرو فوروساوا نے ایک بیان دیتے ہوئے کہا کہ ترقی کی بنیاد پر اصلاحات کو وسیع تر کیا جاسکتا ہے جس سے مالیاتی خسارہ کا اندیشہ بھی نہیں رہتا۔ انہوں نے نشاندہی کی کہ سری لنکا میں مختلف کمپنیاں اپنی سرگرمیاں اطمینان بخش طور پر انجام نہیں دے رہی ہیں، جس سے ملک پر قرضہ جات کا بوجھ ہے اور جہاں تک افراط زر سے لاحق خطرات موجود ہیں، وہیں سنٹرل بینک کو بھی اپنی سود کی شرحوں میں نظرثانی کرنے کی ضرورت ہے۔ مندرجہ بالا 251 ملین امریکی ڈالرس کو منظوری جاریہ سال کے اوائل میں دی جانے والی تھی تاہم کولمبو میں موجود عہدیداروں نے بتایا کہ ٹیکس اصلاحات اور مانیٹری پالیسی پر آئی ایم ایف کے ساتھ پیدا ہوئے اختلافات تاخیر کی وجہ بنے۔

TOPPOPULARRECENT