Tuesday , December 12 2017
Home / کھیل کی خبریں / سری لنکن ٹیم کا دورہ ، پاکستان کیلئے اچھی علامت

سری لنکن ٹیم کا دورہ ، پاکستان کیلئے اچھی علامت

پی سی بی قابل ستائش ، سری لنکا حقیقی دوست ، عمران خان اور میاں داد کے تبصرے

کراچی ۔ /29 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) افسانوی کرکٹرس عمران خاں اور جاوید میاں داد نے ٹی ۔ 20 انٹرنیشنل میچ کھیلنے سری لنکا کرکٹ ٹیم کے دورہ لاہور کو انٹرنیشنل کرکٹ کی پاکستان واپسی کی ایک علامت قرار دیا ہے ۔ عمران خان نے ایک ٹیلی ویژن چیانل سے کہا کہ ’’سری لنکا کی ٹیم کو لاہور میں دیکھتے ہوئے مجھے خوشی ہوئی ہے جو آج قذافی اسٹیڈیم میں کھیلے گی ۔ ان کا دورہ ہمارے کرکٹ کے لئے کافی اہم ہے اور امید ہے کہ اس سے مزید ٹیموں کی پاکستان آمد کی راہ ہموار ہوگی ‘‘ ۔ سری لنکا وہ پہلی سرکردہ بین الاقوامی ٹیم ہے جو آٹھ سال کے دوران پہلی مرتبہ پاکستان کے دورہ پر کل رات ابوظہبی سے لاہور پہونچی ہے ۔ مارچ 2009 ء کے دوران سری لنکا کرکٹ ٹیم پر عسکریت پسندوں نے حملہ کیا تھا جس کے بعد پاکستان آٹھ سال تک بین الاقوامی کرکٹ کے میدان میں سب سے الگ تھلگ اور یکا و تنہا ہوگیا ہے ۔ سابق کپتان اور ورلڈ کپ ہیرو عمران خان نے جو اب اس ملک کے سرکردہ سیاستداں بن گئے ہیں بالعموم پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیرمین نجم سیٹھی سے آنکھ سے آنکھ نہیں ملاتے اور اکثر ان پر تنقید کرتے رہے ہیں ۔ لیکن عمران خان نے آج کہا کہ سری لنکا کی ٹیم کو لاہور لانے پر کرکٹ بورڈ ستائش کا مستحق ہے ۔ ایک اور سابق کپتان جاوید میاں داد نے بھی سرکردہ بین الاقوامی ٹسٹ ٹیم کو لاہور لانے پر پاکستانی کرکٹ بورڈ کی ستائش کی ہے ۔ میاں داد نے کہا کہ ’’سری لنکا کے کھلاڑیوں کا یہ دورہ پاکستان کرکٹ کے لئے بہت بہتر ثابت ہوگا ۔ میں سمجھتا ہوں کہ اب بہت جلد پاکستان میں ہندوستانی کرکٹ کے دروازے کھل جائیں گے ‘‘ ۔ میاں داد نے کہا کہ سری لنکا کی حکومت ، ان کا کرکٹ بورڈ (ایس ایل سی ) اور کھلاڑیوں نے لاہور میں میچ کھیلنے سے اتفاق کرتے ہوئے دکھادیا ہے کہ وہ پاکستان کے حقیقی دوست ہیں ۔ پاکستان کے ایک اور سابق کپتان اور فاسٹ بولر وقار یونس نے کہا کہ ملک کے نوجوان کھلاڑیوں کے لئے وہ بہت خوش ہیں ۔

TOPPOPULARRECENT