Friday , November 24 2017
Home / عرب دنیا / سعودی عرب میں قتل کے مجرم کا سَر قلم

سعودی عرب میں قتل کے مجرم کا سَر قلم

ریاض۔ 13 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) سعودی عرب نے قتل کے مجرم اپنے ایک شہری کا آج سَر قلم کرتے ہوئے سزائے موت پر تعمیل کی جس کے ساتھ ہی اس قدامت پسند مملکت میں سزائے موت پانے والے افراد کی تعداد 72 تک پہونچ گئی۔ سرکاری خبر رساں ادارہ سعودی عرب پریس ایجنسی (ایس پی اے) کے ذریعہ وزارتِ داخلہ کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان کے مطابق ہادیان القہطانی کو ایک جھگڑے کے دوران اپنے ہم وطن عبداللہ القعود کو گولی مارکر ہلاک کرنے کے جرم کا مرتکب پایا گیا تھا۔ سعودی عرب میں اکثر مجرمین کا سَر قلم کرتے ہوئے سزائے موت پر تعمیل کی جاتی ہے۔ چند دوسروں کو گولی مارکر ہلاک کیا جاتا ہے۔ اس سال 2 جنوری کو صرف ایک دن میں سب سے زیادہ 47 مجرمین کو ’دہشت گردی‘ کے جرم کی سزا پر تعمیل کی گئی تھی۔ انسانی حقوق کی تنظیم ’’ایمنسٹی انٹرنیشنل‘‘ نے کہا کہ سعودی عرب میں دو دہوں کے دوران گزشتہ سال سب سے زیادہ 153 افراد کے سر قلم کئے گئے تھے، تاہم یہ تعداد چین اور ایران میں سزائے موت پانے والوں سے بہت کم تھی۔ سعودی عرب میں سخت اسلامی قانونی ضابطہ نافذ ہے جس کے تحت قتل، منشیات کی اسمگلنگ، مسلح ڈکیتی، عصمت ریزی، اِرتداد جیسے تمام جرائم کیلئے سزائے موت دی جاتی ہے۔

TOPPOPULARRECENT