Monday , July 16 2018
Home / عرب دنیا / سعودی عرب پر میزائل حملے کی ہیومن رائٹس واچ نے مذمت کی

سعودی عرب پر میزائل حملے کی ہیومن رائٹس واچ نے مذمت کی

قاہرہ ۔ 2 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) ایک معروف بین الاقوامی حقوق گروپ نے یمن کے شیعہ باغیوں سے اپیل کی ہیکہ وہ سعودی عرب پر اپنے میزائل داغنا بند کردیں جبکہ اسی گروپ نے سعودی عرب پر بھی اپنے پڑوسی یمن کے بائیکاٹ پر شدید تنقید کی ہے۔ ہیومن رائٹس واچ نے ایک رپورٹ میں آج کہا کہ سعودی عرب یمن پر مختلف پابندیاں عائد کرنے کو یہ کہہ کر منصفانہ قرار نہیں دے سکتا کہ حوثی باغی سعودی پر میزائل داغ رہے ہیں۔ ہیومن رائٹس واچ کی مشرق وسطیٰ کی ڈائرکٹر سارہ لیہہ ویٹس نے کہا کہ یمن کے شہریوں کو اس وقت زندگی بچانے والی اشیاء اور ادویات کی ضرورت ہے اور سعودی عرب نے ان پر اپنی سرحد کے دروازے بند کر رکھے ہیں۔ اگر سعودی یہ کہہ کر اپنی اس غیرانسانی حرکت کو منصفانہ قرار دینا چاہتا ہے کہ یمن کے باغی حوثی اس پر میزائل برسا رہے ہیں تو سعودی کا یہ استدلال ناقابل فہم ہے۔ یاد رہیکہ عرب ممالک کی اکثریت والے ایک اتحاد کی سعودی عرب قیادت کررہا ہے اور 2015ء سے یہ اتحاد حوثیوں کے ساتھ حالت جنگ میں ہے اور ساتھ ہی ساتھ یمن پر بھی پابندیاں عائد کر رکھی ہیں۔ سعودی سرحد کے قریب یمن کے تقریباً تمام شمالی علاقوں پر حوثیوں کا کنٹرول ہے اور 26 مارچ کو حوثیوں نے سعودی عرب پر سات بالسٹک میزائل برسائے تھے جن میں ایک فرد ہلاک ہوا تھا۔

TOPPOPULARRECENT